The news is by your side.

Advertisement

وٹہ سٹہ کی شادی، والدین نے بیٹوں کو زنجیروں میں جکڑ دیا

میلسی : پولیس نے زنجیروں میں جکڑی 2بہنوں کو بازیاب کرالیا، دونوں بہنوں کو والدین نے زنجیروں میں جکڑ رکھا تھا۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب کے شہر میلسی میں ماں باپ نے اپنے ظالمانہ عمل سے انسانیت کو شرما دیا، دو بہنوں کو گزشتہ کئی روز سے زنجیروں میں جکڑ کر رکھا ہے، اپنے ہی گھر میں بچے قیدیوں سے بدتر حالت میں ظلم سہتے رہے، جسے کرم پور پولیس نے آزاد کرایا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ دو بہنوں کو ان کے والدین نے زنجیروں میں جکڑ رکھا تھا، متاثرہ لڑکی نے پولیس کو دئیے گئے بیان میں بتایا کہ میری وٹہ سٹہ کی شادی ہوئی ہے۔

متاثرہ لڑکی کا کہنا تھا کہ میری بھابھی میرے بھائی کے ساتھ رہنا نہیں چاہتی جس کے باعث والدین نے مجھے بھی شوہر کے گھر جانے سے روک دیا۔

پولیس کو دئیے گئے بیان میں لڑکی نے بتایا کہ میری بہن نے مجھے چھڑانے کی کوشش کی تو والدین نے میری بہن کو بھی زنجیروں میں باندھ دیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پولیس نے دونوں بہنوں کو ظالم والدین سے آزاد کرانے کے بعد علاقہ مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کردیا۔

سوتیلی ماں کا معصوم بچوں پر ظلم، 5 ماہ سے زنجیروں میں بھوکا پیاسا باندھے رکھا

یاد رہے کہ گزشتہ روز کراچی کے علاقے گلبرگ میں سوتیلی ماں کی جانب سے مامتا ہو شرما دینے والا واقعہ سامنے آیا تھا جس میں سوتیلی ماں نے دو معصوم بچوں کو بانچ ماہ سے برہنہ حالت میں زنجیروں سے باندھ رکھا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں