The news is by your side.

فرانس میں دہشت گردی کی 6 کارروائیاں ناکام بنائی گئیں، فرانسیسی وزیر داخلہ

پیرس: فرانسیسی وزیر داخلہ نے کہا ہے کہ رواں سال سیکیورٹی اداروں نے فرانس میں دہشت گردی کی 6 کارروائیاں ناکام بنا کر ملک کو تباہی سے بچایا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق تین سال قبل پیرس میں ہونے والے ایک حملے میں 130 افراد کی ہلاکتوں کی تیسری برسی کی تقریب سے خطاب میں فرانسیسی وزیر داخلہ کریسٹوف کاسٹائیر نے کہا کہ گزشتہ ہفتے ایک انتہا پسند کو گرفتار کیا گیا جو صدر میکرون پر حملے کی منصوبہ بندی کررہا تھا۔

فرانسیسی وزیر داخلہ نے کہا کہ پولیس نے ایک سال کے دوران دہشت گردی کی 6 سازشیں ناکام بنائیں، ہر ہفتے پولیس اور دیگر سیکیورٹی ادارے دہشت گردی کے خطرات سے نمٹنے کے لیے ممکنہ اقدامات کرتے ہیں۔

واضح رہے کہ تین سال قبل پیرس کے نواحی علاقے باٹا کلان میں ایک موسیقی پروگرام پر حملے میں 130 افراد ہلاک ہوگئے تھے، اس حملے کی ذمہ داری داعش نے قبول کی تھی۔

مزید پڑھیں: فرانسیسی صدر کے قتل کا منصوبہ بنانے والے 6 ملزمان گرفتار

یاد رہے کہ جولائی 2017 کو بیسٹائل ڈے کی تقریب سے قبل صدر میکرون دہشت گردوں کی جانب سے قاتلانہ حملے کا نشانہ تھے جس کے جرم میں ایک شخص پر فرد جرم عائد کی گئی تھی۔

اکتوبر 2017 میں اینٹی ٹیرر ازم پولیس نے مسجد پر حملوں، تارکین وطن کو نشانہ بنانے سمیت سیاست دانوں پر حملے کرنے کے الزام میں 10 افراد کو گرفتار کیا تھا۔

رواں سال 10 جون کو دائیں بازو کے گروپ آپریشنل فورسز ایکشن کے 10 ممبران پر مسلمانوں پر حملے کی منصوبہ بندی کے الزام پر فرد جرم عائد کی گئی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں