The news is by your side.

Advertisement

کیا سوشل میڈیا انسانی تہذیب کیلئے خطرناک ہے؟

مختلف ممالک کے سائنسدانوں کے ایک گروپ نے مشترکہ تحقیقی مقالے میں سوشل میڈیا کو انسانیت کے لیے خطرناک قرار دیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ آنے والے وقت میں یہ ٹیکنالوجی انسانیت اور انسانی تہذیب کو تباہ کردے گی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق مختلف ممالک کے سائنسدانوں کے ایک گروپ نے مشترکہ تحقیقی مقالے میں سوشل میڈیا کو انسانیت کے لیے خطرناک قرار دیا۔

انہوں نے کہا کہ اگر سوشل میڈیا پر انسانوں کے اجتماعی طرز عمل اور سوچ میں تبدیلی کو نہ سمجھا گیا تو یہ ٹیکنالوجی انسانیت اور انسانی تہذیب کو تباہ کر دے گی۔

ماہرین نے کہا کہ انٹرنیٹ اور سوشل میڈیا کی بدولت انسانوں کے باہمی رابطے نہ صرف بہت بڑھ چکے ہیں بلکہ ان کی پیچیدگی بھی ماضی میں انسانی سماج کی نسبت کئی گنا زیادہ ہوچکی ہے۔

انہوں نے خبردار کیا کہ اگر انسانی پیمانے پر ٹیکنالوجی کے اثرات نہ سمجھے گئے تو ہم آنے والے برسوں میں کسی غیر ارادی اور غیر متوقع تباہی کا شکار ہو سکتے ہیں۔

ماہرین نے کورونا وائرس کی غلط اور بے بنیاد خبروں کے وسیع تر پھیلاؤ اور اس پھیلاؤ سے برآمد ہونے والے سنگین نتائج کو اس امر کی تازہ ترین مثال کے طور پر پیش کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مستقبل میں ہم جدید ٹیکنالوجی سے پیدا ہونے والے غیر ارادی، غیر متوقع اور منفی نتائج کا بڑے پیمانے پر سامنا کرسکتے ہیں جن میں انتخابی دھاندلی کے ساتھ ساتھ بیماری، پرتشدد انتہا پسندی، خشک سالی، نسل پرستی اور جنگی حالات تک شامل ہوسکتے ہیں۔

دوسری جانب سائنسدانوں نے سوشل میڈیا کو مکمل طور پر غلط تو قرار نہیں دیا بلکہ مختلف مواقع پر سوشل میڈیا کے کردار کو سراہا بھی گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں