The news is by your side.

Advertisement

سافٹ ویئر انجینئر کی دردناک ہلاکت، دیکھنے والے ہکا بکا رہ گئے

حیدرآباد : بھارت میں سافٹ ویئر انجینئر دردناک موت کا شکار ہوگیا، متوفی کھلے گٹر میں گرنے بعد گندے پانی میں بہہ گیا، لاش کی تلاش کی جارہی ہے۔

بھارتی ریاست تلنگانہ کے شہر حیدرآباد میں حالیہ طوفانی بارشوں کے بعد ایک دردناک واقعہ پیش آیا ہے جس کے بعد شہر میں خوف وہراس پھیلا ہوا ہے۔

حیدرآباد کے گولڈن ٹمپل علاقہ میں ایک سافٹ ویئر انجینئر حادثاتی طور پر مین ہول میں گرنے کی وجہ سے بہہ گیا تھا، جس کی تلاش کا کام گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن (جی ایچ ایم سی) اور ڈی آر ایف کی ٹیمیں سرگرمی سے کررہی ہیں۔

مین ہول میں گرکر بہہ جانے والے سافٹ ویر انجینئر کی تلاش جاری

شہر میں طوفانی بارش کے دوران منی کونڈا کےعلاقے میں ایک شخص کھلے مین ہول میں گرگیا،مین ہول کے گڑھے میں گرنے کے دوران تیز بارش کے باعث پانی کا بہاؤ اتنا شدید تھا جو اس کو بہا کر لے گیا۔

یہ واقعہ کل شب 9 بجے پیش آیا یہ شخص سڑک عبور کررہا تھا جہاں پر گٹر لائنیں کھلی ہوئی تھیں۔ کی شناخت 42سالہ رجنی کانت کے طورپر کی گئی ہے۔

اس واقعہ کی ویڈیو قریب کی ایک فلیٹ کی بالکونی سے ایک شخص نے بنائی جو سوشل میڈیا پر تیزی کے ساتھ وائرل ہورہی ہے، امدادی ٹیمیں بہہ جانے والے شخص کی تلاشی کا کام جاری رکھے ہوئے ہیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق متوفی رجنی کانت کی رہائش جائے وقوعہ سے تقریباً 50 میٹر کے فاصلے پر ہے جبکہ وہ شاد نگر کی نووا گرین کمپنی میں ملازمت کرتا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں