The news is by your side.

سہراب گوٹھ میں غیر قانونی مقیم افغان شہریوں کے خلاف بڑا آپریشن شروع

کراچی: سہراب گوٹھ میں غیر قانونی مقیم افغان شہریوں کے خلاف بڑا آپریشن شروع ہو گیا۔

تفصیلات کے مطابق شہر قائد کے علاقے سہراب گوٹھ کے قریب پولیس کی بھاری نفری نے مخصوص علاقے کو گھیرے میں لے کر غیر قانونی مقیم افغان شہریوں کے خلاف آپریشن شروع کر دیا۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ پولیس کی بھاری نفری سہراب گوٹھ پہنچ چکی ہے جو غیر قانونی مقیم افغان شہریوں کے خلاف گرینڈ آپریشن کر رہی ہے۔

پولیس ٹیم کی سربراہی ڈی ایس پی سہراب گوٹھ چوہدری سہیل فیض کر رہے ہیں، انھوں نے بتایا کہ مخصوص علاقے کو گھیرے میں لے لیا گیا ہے، اور داخلی و خارجی راستے بند کر کے گھر گھر تلاشی کا عمل جاری ہے۔

آپریشن میں درجنوں پولیس اہلکار شامل ہیں، تصاویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ پولیس کی نفری موبائلوں اور موٹرسائیکلوں پر موجود ہے۔

حکام کے مطابق اس آپریشن کے دوران شہریوں کی شناختی تصدیق کی جا رہی ہے، شہریوں سے نہ صرف ان کے شناختی کارڈ طلب کیے جا رہے ہیں بلکہ بائیو میٹرک کے ذریعے بھی شناخت کی جا رہی ہے۔

غیر قانونی طریقے سے بارڈر کراس کر کے آنے والے 26 افغانی گرفتار

ڈی ایس پی چوہدری سہیل فیض نے بتایا کہ سہراب گوٹھ کے مخصوص علاقوں میں کومبنگ آپریشن آئی جی اور ڈی آئی جی کے احکامات پر ہو رہا ہے، گزشتہ رات 26 گرفتاریاں ہوئیں، اور آج مزید 15 افغان شہریوں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ نادرا کی ٹیم بھی پولیس کے ساتھ ہونی چاہیے، کیوں کہ افغان شہریوں کے پاس جعلی آئی ڈیز ہوتی ہیں، اصل اور نقل کا پتا نہیں چلتا، یہ گرفتار ہوتے ہیں اور پھر ضمانت کے بعد واپس آ جاتے ہیں، یہ ہائی ویز اور دیگر ڈکیتیوں میں بھی ملوث ہیں، فیکٹریوں اور سبزی منڈی میں بھی کرائم کرتے ہیں۔

یاد رہے کہ سہراب گوٹھ ہنگامہ آرائی واقعے میں بھی زیادہ تر غیر قانونی افغانی ملوث تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں