The news is by your side.

Advertisement

جنوبی افریقا نے اسرائیل میں سفارتی مشن کا درجہ کم کر دیا

پریٹوریا : جہاں دنیا بھر کے ممالک اپنے سفارت مشن میں اضافہ کررہے تھے وہیں جنوبی افریقا نے اسرائیل میں اپنے سفارتی مشن کا درجہ کم کر دیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق جنوبی افریقا کے صدر سیریل رامافوز نے ایک بیان میں کہا ہے کہ انہوں نے اسرائیل میں سفارت خانے کا درجہ کم کرنے کے لیے اقدامات شروع کردیے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اسرائیل میں سفارت خانے کا درجہ کم کرنے کا فیصلہ حکمراں جماعت نیشنل کانگریس کے فیصلے پر عمل درآمد کرتے ہوئے کیا گیا ہے۔

صدر راما فوز نے پارلیمنٹ کے اجلاس سے خطاب میں کہا کہ حکومت فلسطینی قوم اور اس کے دیرینہ حقوق کی حمایت جاری رکھے گی۔ فلسطینیوں کو اپنے حقوق کے حصول کا حق ہے۔ ہماری وزارت خارجہ نے اسرائیل میں قائم سفارتخانے کا درجہ کم کرنے لیے اقدامات شروع کر دیئے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جنوبی افریقا نے تل ابیب میں اپنے سفات خانے کے درجے میں کمی کی وجہ اسرائیلی ریاست کی طرف سے فلسطینیوں کے حقوق کی پامالیاں اور مشرق وسطیٰ میں قیام امن کی راہ میں رکاوٹیں ڈالنا ہے۔

مزید پڑھیں : آسٹریلیا نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرلیا

رومانیہ کے بعد جمہوریہ چیک نے بھی سفارت خانہ یروشلم منتقل کرنے کا اعلان کردیا

رومانیہ نے بھی یروشلم کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرلیا

یاد رہے کہ گزشتہ برس امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنے اور اپنا سفارت خانہ بیت المقدس منتقل کرنے کے بعد آسٹریلیا، رومانیہ سمیت دنیا بھر کے متعدد ممالک اپنے سفارت خانے یروشلم منتقل کرچکے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں