The news is by your side.

Advertisement

اسپین میں آن لائن ٹیکسی سروس کے خلاف ٹیکسی ڈرائیورز کی ہڑتال، سڑکیں بلاک

میڈرڈ: اسپین میں ٹیکسی ڈرائیورز نے آن لائن ٹیکسی سروس کے خلاف ہڑتال کردی جس کے نتیجے میں دارالحکومت میڈرڈ اور بارسلونا میں سڑکیں بلاک اور ٹریفک جام ہوگیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اسپین میں ایک لاکھ تیس ہزار ٹیکسی ڈرائیورز 29 جولائی سے احتجاج کررہے ہیں، ڈرائیورز یونین کا مطالبہ ہے کہ قانون کے مطابق تیس روایتی ٹیکسیوں کے مقابلے میں ایک آن لائن ٹیکسی کو لائسنس جاری کیا جائے۔

ٹیکسی ڈرائیورز یونین کا کہنا ہے کہ آن لائن ٹیکسی سروس مہیا کرنے والی کمپنی ایک لائسنس دوسرے ڈرائیور کو مہیا کردیتی ہے، ان کے لائسنس کی فیس آن لائن سروس مہیا کرنے والوں کی نسبت بہت زیادہ ہے، وہ ان کا مقابلہ نہیں کرسکتے۔

یونین کا کہنا ہے کہ اگر اسپین حکومت کی جانب سے مطالبات منظور نہ کیے گئے تو پورٹس، ایئرپورٹ اور بارڈر پر احتجاج کرتے ہوئے اسے بلاک کردیں گے، احتجاج میں شامل کچھ ڈرائیوروں نے بلاک کیے جانے والی سڑک پر ہی خیمے لگادیے اور گدے لگا کر وہاں رات بسر کی۔

بارسلونا کے 38 سالہ ٹیکسی ڈرائیور انٹونیو ریمریز نے کہا ہے کہ احتجاج کرنا ہماری ایک بڑی قربانی ہے، ان دنوں سیزن عروج پر ہے، مختلف ممالک کے سیاح بارسلونا کا رخ کرتے ہیں اور ہمیں ان سے اچھی آمدنی حاصل ہوتی ہے تاہم اب بس بہت ہوچکا ہمارے مطالبات تسلیم ہونے چاہئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ بہت سے ٹیکسی ڈرائیورز نے لائسنس کے حصول کے لیے قرضہ حاصل کررکھا ہے، قرضہ اتارنے کے لیے انہیں دشواری کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں