The news is by your side.

Advertisement

سندھ اسمبلی میں ہنگامہ، جوتا دکھانے پر نصرت عباسی کو ایوان سے باہر نکالنے کا حکم

کراچی : سندھ اسمبلی میں حکومتی رکن کی تقریر پر مسلم لیگ فنکشنل اور دیگر اپوزیشن اراکین کا احتجاج، شہلا رضا نے نصرت عباسی کو جوتا دکھانے پر ایوان سے باہر نکالنے کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کی گرمی کا اثر سندھ اسمبلی پر بھی ہوا اور اسمبلی آج پھر مچھلی منڈی بنی رہی، حکومتی بنچوں سے اپوزیشن جماعتوں پر تنقید پر خوب گرما گرمی ہوئی۔

سندھ اسمبلی میں حکومتی افراد کی جانب سے تنقید پر اپوزیشن ارکان آگ بگولہ ہوگئے اور نصرت سحر عباسی نے تو احتجاجاً حکومتی ارکان کو جوتا دکھا دیا۔

مسلم لیگ فنکشنل کی رکن صوبائی اسمبلی نصرت سحر عباسی کی جانب سے جوتا دیکھائے جانے پر ڈپٹی اسپیکر شہلا رضا نصرت سحر عباسی پر برہم ہوگئی اور ایوان سے باہر نکالنے کا حکم دے دیا۔

رکن صوبائی اسمبلی نصرت سحر عباسی نے کہا کہ خواتین کی بے حرمتی اور بے عزتی کرنے والے اسی قابل ہیں کہ انہیں جوتے پڑیں۔

نصرت سحر عباسی کا کہنا ہے کہ اگر آئندہ بھی کسی نے ایسی حرکت کرنے کی کوشش کی تو اسے جوتے پڑیں گے، اسمبلی میں حکومت پر تنقید کریں تو خواتین ممبران اسمبلی کو حیا یاد دلائی جاتی ہے۔

سندھ اسمبلی کی ڈپٹی اسپیکر شہلا رضا نے خواجہ اظہار الحسن کو شہلا کہہ کر مخاطب کرنے پر ڈانٹ لگاکر کہا کہ ’کیا کیا شہلا شہلا لگا رکھا ہے، ایوان میں ڈپٹی اسپیکر ہوں ڈپٹی اسپیکر کہہ کر مخاطب کریں‘۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں