The news is by your side.

Advertisement

بچوں کی فحش فلمیں بنانے کا ملزم چارروزہ ریمانڈ پرایف آئی اے کے حوالے

لاہور : مقامی عدالت نے چائلڈ پورنو گرافی کے الزام میں گرفتار ملزم کو چار روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کر دیا، بچوں کے خلاف جنسی جرائم کی تفتیش کے لئے خصوصی کمیٹی تشکیل دے دی گئی۔

تفصیلات کے مطابق فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی نے بچوں کی نازیبا ویڈیوز بنانے اور انہیں انٹر نیٹ پر اپ لوڈ کرنے کے الزام میں گزشتہ روز جھنگ سے گرفتار ہونے والے ملزم تیمور کو جسمانی ریمانڈ کیلئے عدالت میں پیش کیا۔

ایف آئی اے نے عدالت کو بتایا کہ ملزم تیمور کمسن بچوں کی فحش ویڈیوز بنا کرغیر ملکی ویب سائٹس پر اپ لوڈ کرتا ہے وہ ایک منظم گروہ سے تعلق رکھتا ہے، اس گروہ کے متعلق غیر ملکی اداروں کی نشاندہی پر کارروائی کی گئی اور اسے گرفتار کیا گیا۔

اب ملزم سے تفتیش کے ذریعے مذکورہ ویڈیوز، جائے وقوعہ کی نشاندہی اور اس کے دیگر ساتھی ملزمان کے بارے میں پوچھ گچھ اور ان گرفتاری کیلئے چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ دیاجائے۔

عدالت نے فریقین کا مؤقف سننے کے بعد ملزم کو چار روزہ ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کردیا، یاد رہے کہ ملزم تیمور الیکٹریکل انجینئر ہے اور اس کو گزشتہ روز جھنگ سے گرفتار کیا گیا تھا۔

اس حوالے سے ڈپٹی ڈائریکٹرایف آئی اے سا ئبرکرائمز خا لد انیس کا کہنا تھا کہ ملزم سے برآمد60جی بی ڈیٹا اسکین کرلیا گیاہے، ممنوعہ فلمیں دیگر ملکوں کے بچوں کی ہیں اس میں پاکستان کے کسی بچے کی کوئی وڈیو شامل نہیں۔

علاوہ ازیں ایف آئی اے نے بچوں کے خلاف جنسی جرائم کی تفتیش اور اس کی روک تھام کے لئے دو رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے، مذکورہ کمیٹی مختلف علاقوں میں ہونے والی اس طرح کی واردارتوں کے سدباب کیلئے مؤثر اقدامات کرے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں