The news is by your side.

Advertisement

مولانا فضل الرحمان کے تہلکہ خیز انکشافات

ڈی آئی خان: جمعیت علماء اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے سنسنی خیز انکشافات کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں بلوچستان حکومت، سینیٹ کی چیئرمین شپ اور گورنر خیبرپختونخوا کے عہدے کی پیشکش کی گئی۔

ڈیرہ اسماعیل خان میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے دعویٰ کیا کہ انہیں حکومت کی جانب سےاہم عہدوں کی پیشکش کی گئیں جنہیں انہوں نے مسترد کردیا۔

مولانا فضل الرحمان نے انکشاف کیا کہ انہیں کہا گیا کہ بلوچستان حکومت دے دیتے ہیں، خیبرپختونخوا کے گورنر اور سینیٹ کی چیئرمین شپ کی پیشکش تھی کی، جس پر ان کا کہنا تھا کہ ہم سیاسی لوگ ہیں ، ان پیشکشوں کو حقیر سمجھا اور تمام آفرز مسترد کردیں۔

ان پیشکشوں کو حقیر سمجھا اور تمام آفرز مسترد کردیں

جے یو آئی(ف) کے سربراہ کا کہنا تھا کہ ہماری احتجاجی تحریک اب گلی کوچوں اور بازاروں تک پھیل گئی ہے، ہر ضلع میں احتجاجی جلسے کیے جائیں گے، اس نااہل حکومت کو گھر جانا ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم کے پاس جانے کے سوا کوئی راستہ نہیں، انہیں اب استعفیٰ دینا پڑے گا، وزیراعظم کی تقریر میں جو الفاظ استعمال ہوئے وہ ان کے شایان شان نہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں