The news is by your side.

Advertisement

ایف آئی اے عملے کی کمی، کراچی ایئر پورٹ پر مسافروں کا رش لگ گیا

پروازوں کی روانگی میں تین گھنٹے کی تاخیر، شکایات پر کوئی شنوائی نہیں ہوئی

کراچی: ایف آئی اے امیگریشن کاؤنٹر پر عملے کی کمی کے باعث کراچی ایئرپورٹ کے امیگریشن کاؤنٹر پر مسافروں کی قطاریں لگ گئیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی ایئر پورٹ پر ایف آئی اے امیگریشن کاؤنٹر پر عملے کی کمی کی وجہ سے ایئر پورٹ پر مسافروں کا رش لگ گیا ہے، عملے کی کمی کے باعث پروازوں کی روانگی میں تاخیر ہو رہی ہے۔

بیرون ملک جانے والوں کو رش لگنے کی وجہ سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، بوڑھے، بچے اور خواتین قطاروں میں کھڑے ہونے پر مجبور ہیں، ذرایع کا کہنا ہے کہ ایف آئی اے کو شکایت کرنے کے باوجود کوئی شنوائی نہیں ہو رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  کراچی ایئر پورٹ منیجر کا کچرا کنڈیوں کے خاتمے کے لیے کمشنر کو خط

ذرایع کا کہنا ہے کہ عملے کی کمی کی وجہ سے رش لگنے سے پروازوں کی روانگی میں تین گھنٹے سے زائد کی تاخیر ہوئی ہے۔ اے آر وائی نیوز کے مطابق امیگریشن کاؤنٹر پر کینیڈا، لندن، سعودی عرب، دبئی اور خلیجی ممالک جانے والے مسافروں کا رش ہے۔

امیگریشن کاؤنٹر پر ایف آئی اے کا عملہ ایک مسافر کی امیگریشن کرنے میں پانچ سے دس منٹ لگا رہا ہے، ایف آئی اے امیگریشن عملے کی سست روی کی وجہ سے مسافروں کی طویل قطاروں کو انتظار کرنا پڑ رہا ہے، بورڈنگ کا عمل بھی متاثر ہو گیا ہے۔

ذرایع نے بتایا کہ پی آئی اے سمیت دیگر ایئرلائنز متعدد بار ایف آئی اے کو شکایت کر چکی ہیں لیکن اس کے تدارک کے لیے کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں