The news is by your side.

Advertisement

مارول کامکس کے شہرۂ آفاق کرداروں کے خالق اسٹین لی کا تذکرہ

کامکس کے مداح دنیا بھر میں موجود ہیں۔ کامک بکس آج بھی نہایت شوق سے پڑھی جاتی ہیں، لیکن اسکرین پر نمودار ہونے کے بعد تو ان کرداروں نے گویا ہر طرف دھوم مچا دی۔ ہم بات کریں اسپائیڈر مین، آئرن مین اور دی ہلک جیسے شہرۂ آفاق کرداروں کی تو انھیں کتابوں‌ سے سنیما تک خوب پذیرائی اور مقبولیت حاصل ہوئی۔

ایک طرف تو کامکس کے وہ پرستار ہیں جن کی دل چسپی ان زبردست اور کرشماتی قوّتوں‌ کے حامل کرداروں میں‌ ہے اور دوسری طرف ان کرداروں‌ پر مشتمل کہانیوں کے شائقین ہیں جو خیر اور شَر کی جنگ کے انجام میں دل چسپی رکھتے ہیں۔

ہم نے یہاں‌ جن کرداروں کا ذکر کیا ہے، انھیں کئی دہائیوں قبل اسٹین لی نے اپنے ذہن میں تخلیق کیا تھا اور جلد ہی وہ اس مصنّف کی کہانیوں میں قارئین تک پہنچے۔ اسٹین لی نے 95 برس کی عمر میں وفات پائی۔

اسٹین لی کو بیسویں صدی کا ایک شان دار تخلیق کار کہا گیا کیوں کہ اس کے تخلیق کردہ کرداروں اور مارول کامک بکس نے دنیا بھر میں بچّوں اور نوجوانوں ہی نہیں بڑوں کو بھی اپنا گرویدہ بنا لیا تھا۔ ان کا تعلق امریکا سے تھا۔ 1940ء کے عشرے میں اسٹین لی نے لکھنے کا آغاز کیا تھا اور پھر یہ کردار تخلیق کیے۔ ان کرداروں کو کہانی میں پیش کیا، لیکن بعد میں کامک بک کی اشاعت سے اور بالخصوص اسکرین تک اس مصنّف نے دوسرے آرٹسٹوں کی مدد سے شان دار کام یابیاں اپنے نام کیں، تاہم یہ سب اسٹین لی کی صلاحیتوں اور اس کے جوہرِ تخلیق کی بدولت ہی ممکن ہوا۔

اپنے سفر آغاز میں انھوں نے ایک چھوٹا چھاپہ خانہ قائم کیا اور مارول کامک بکس شایع کرنے لگے۔ اسٹین لی کے تخلیق کردہ کردار بچوں کی نفسیات پر حاوی ہو جاتے ہیں۔ وہ اس مصنّف کی سبق آموز کہانیوں کی بدولت خود انہی کرداروں میں ڈھلا ہوا دیکھتے اور خیالی دنیا میں بدی کی طاقتوں کو شکست دینے لگتے۔ اسٹین لی کو مارول کرداروں پر مبنی کہانیوں کے سبب لیجنڈ کا درجہ حاصل ہے۔ وہ فلم ساز اور مکالمہ نویس بھی تھے۔

سپر مین کے بارے میں بات کرتے ہوئے ایک بار اسٹین لی نے کہا تھا کہ وہ میرے لیے کبھی بھی دل چسپی کا باعث نہیں رہا کیوں کہ میں کبھی اس کے بارے میں فکرمند نہیں ہوا۔ اگر آپ اپنے ہیرو کے لیے فکرمند نہیں ہوتے تو اس میں کوئی جوش نہیں ہوتا۔

اسٹین لی کا ساتھی آرٹسٹ جیک کربی تھا جنھوں نے مل کر 1961ء میں کمپنی مارول کامکس بنائی تھی۔ انھوں نے فینٹیسٹک فور نامی سیریز سے آغاز کیا تھا اور بعد میں ان کے کامک بک کے کردار اسپائیڈر مین اور دی ہلک انتہائی مقبول ہوئے۔

اسٹین لی 28 دسمبر 1922ء کو امریکا، نیویارک میں‌ پیدا ہوئے تھے اور ان کی زندگی کا سفر 12 نومبر 2018ء کو تمام ہوا۔

مارول کامکس کے اس لیجنڈ نے اپنی وفات سے کچھ عرصہ قبل پولیس میں شکایت درج کرائی تھی اور دعویٰ کیا تھا کہ ان کے بینک اکاؤنٹ سے 3 لاکھ ڈالر چوری ہوگئے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اپنے بینک اکاؤنٹ سے رقم نکلوانے کا انھیں علم نہیں تھا اور کہا گیا کہ ایک جعلی چیک کے ذریعے ایسا کیا گیا ہے۔

ہالی وڈ میں اسٹین لی کے تخلیق کردہ کرداروں پر فلمیں بنائی گئیں جو بے حد مقبول ہوئیں اور فلم سازوں کو زبردست مالی منافع دیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں