The news is by your side.

Advertisement

منی لانڈرنگ کی روک تھام کے لیے اسٹیٹ بینک کے رہنما اصول جاری

اسلام آباد : اسٹیٹ بینک نے منی لانڈرنگ کے خلاف اقوام متحدہ کی سیکیورٹی کونسل کی قرارداد کے تناظر میں نئے رہنما اُصول جاری کر دیئے ہیں.

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے اقوام متحدہ کی قرارداد کی روشنی میں نئے رہنما اصول وضع کردیئے ہیں جس کے تحت اور تمام مالیاتی اداروں کو ان اصولوں پرسختی سے عمل درآمد کرنے کی ہدایت کی ہے.

ذرائع کے مطابق اس حوالے سے اسٹیٹ بینک کی جانب سے ایک مراسلہ جاری کیا ہے جس میں واضح کیا گیا ہے کہ ضوابط اور ہدایات کی روشنی میں کالعدم تنظیموں اور ان سےمنسلک افراد کے خلاف پابندیاں حکومتی اقدامات کی بنیاد پر مسلسل لاگو رہیں گی.

اسٹیٹ بینک نے اپنے مراسلے میں ملک بھر کی ترقیاتی و مالیاتی اداروں اور مائیکرو فنانس بینکوں کوکہا ہے کہ وہ ہدایات کی تعمیل کو یقینی بناتے ہوئے منی لانڈرنگ کی سرکوبی کے لیے اپنا کرداربھر پور طریقے سے ادا کریں.

مراسلے میں کہا گیا ہے کہ بینکس، ڈی ایف آئی یا پھر ایم ایف بی کسی بھی کالعدم یا نامزد کمپنی اور افراد کو یا پھر ان سےمتعلقہ کسی بھی شخص کو انسداد منی لانڈرنگ اور دہشت گردی کی مالی معاونت ریگولیشن کےتحت بینکنگ کی سہولیات فراہم نہ کریں۔

خیال رہے نائن الیون منی لانڈرنگ بین الاقوامی سطح پر قابل گرفت جرم بن چکا ہے جسے دہشت گردی سہولت کاری کے مترادف سمجھا جاتا ہے اور تمام ہی مغربی ممالک نے منی لانڈرنگ کے خلاف سخت قانون مرتب کر لیے ہیں.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں