مائیک پومپیو کے دورہ پاکستان کا اعلامیہ: امریکا نے "ڈو مور" کا روایتی مطالبہ دہرا دیا
The news is by your side.

Advertisement

مائیک پومپیو کے دورہ پاکستان کا اعلامیہ: امریکا نے “ڈومور” کا روایتی مطالبہ دہرا دیا

واشنگٹن: امریکی محکمہ خارجہ نے مائیک پومپیو کے دورہ پاکستان کا اعلامیہ جاری کردیا، جس کے مطابق امریکا نے پاکستان سے پھر ڈومور کا مطالبہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکا نے پاکستان سے ڈومور کا روایتی مطالبہ دہرا دیا،  امریکی وزیر خارجہ نے پاکستان پر افغانستان میں امن کے لیے کردار ادا کرنے اور دہشت گردوں، شدت پسندوں کے خلاف فیصلہ کن اقدامات کرنے پر زور دیا ہے.

اعلامیے کے مطابق امریکا نے پاکستان پر زور دیا ہے کہ خطے کی سلامتی کے لئے دہشت گردوں، شدت پسندوں کے خلاف کارروائی کرے.

وزیراعظم عمران خان، آرمی چیف اور وزیرخارجہ سے ملاقاتوں میں پاکستان کی نئی حکومت سے متعلق گفتگو ہوئی. اعلامیے میں کہا گیا کہ مائیک پومپیو اورجنرل باجوہ کی ملاقات خوش آئند رہی، مائیک پومپیونےدونوں ممالک کےتعلقات کی اہمیت پرزور دیا.

مزید پڑھیں: امریکی وفد نے ڈو مور کا کوئی مطالبہ نہیں کیا، وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی

ملاقات میں انسداددہشت گردی پرتعاون بڑھانے پرگفتگو ہوئی. مائیک پومپیو نے کہا کہ شہری حکومت کو ہموار طریقے سے اقتدارکی منتقلی بہترعمل ہے.

امریکی وزیرخارجہ نے عمران خان کووزارت عظمیٰ کامنصب سنبھالنےپرمبارک باد دی. شاہ محمود سے ملاقات میں دونوں ملکوں کے مشترکہ کام کرنے اور عوام میں رابطے، ثقافتی سطح پر تعلقات بہتربنانے پر بھی زور دیا گیا.


امریکا پاکستان کی قربانی پھر بھول گیا

امریکی محکمہ خارجہ اعلامیہ میں پاکستان کی قربانی کو یاد کرنا پھر بھول گیا. پومپیونےدہشت گردی کی جنگ میں سب سے بڑے پارٹنرکی قربانیاں نظراندازکر دیں.

دورے میں‌ مائیک پومپیو پاکستان کی 60 ہزار سے زائد شہادتوں کا ذکر زبان پر نہ لائے، مائیک پومپیونےدہشت گردی کے خلاف پاکستان کے 80 ارب ڈالر سےزائدکےنقصان کا ذکر بھی نہیں کیا.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں