The news is by your side.

Advertisement

سنگدل بیٹے کے ہاتھوں تشدد کا نشانہ بننے والی مظلوم ماں کا بیان سامنے آگیا

راولپنڈی: سنگدل بیٹے کے ہاتھوں تشدد کا نشانہ بننے والی مظلوم ماں کا کہنا ہے بیوی کے کہنے پر بیٹے نے مارا اور باہرپھینک دیا، مقدمہ درج ہوچکا ہے لیکن پولیس نے بیٹے کوابھی تک نہیں پکڑا۔

تفصیلات کے مطابق جائیداد کا تنازع اور گھریلو جھگڑوں نے خون سفید کردیا، راولپنڈی میں سنگ دل بیٹے کے ہاتھوں بد ترین تشدد کا نشانہ بننے والی مظلوم ماں نے اپنے بیان میں کہا کہ بیٹا پہلے بھی انہیں تشدد کا نشانہ بناتا رہا ہے، گھریلو معاملات میں بہو کے کہنے پر بیٹے نے مجھے مارا۔

والدہ کا کہنا تھا کمہ مجھے میرے بیٹے نے گھرسےباہر دھکیل دیا، ایف آئی آردرج ہوچکی لیکن بیٹےکوابھی تک نہیں پکڑاگیا ، پولیس کچھ نہیں کررہی۔

متاثرہ خاتون نے مزید کہا بیوی کی وجہ سے بیٹے نے مجھ سے ہاتھا پائی کی، بیٹا پہلے مجھے کچھ نہیں کہتا تھا ، گھر کا ایک حصہ بیٹے کےنام ہے، بہو نفسیاتی مریض ہے ، بیٹے کو بھی منشیات دیتی ہے۔

یاد رہے راولپنڈی کے علاقے صادق آباد میں جائیداد کے مسئلہ پر سنگ دل بیٹے کی ماں پر بد ترین تشدد کی ویڈیو وائرل ہوگئی تھی، بہن دہائیاں دیتی رہی مگر وحشی انسان پھر بھی نہیں رکا۔

ہہن زوبیہ امیرنےایک ویڈیو میں بھائی بھابھی پرالزام لگایا ہے کہ پولیس نے ارسلان کو کسی کارروائی کے بغیرچھوڑ دیا، میرا بھائی بھابھی زیورات اور اہم دستاویزات لے کر فرار ہیں، زوبیہ کے موبائل فون سے بنی ویڈیو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ ہونے کی کچھ دیر بعد ہی وائرل ہو گئی۔

ویڈیو سوشل میڈیا پروائرل ہوئی توپولیس ایکشن میں آئی اورملزم ارسلان اوراس کی اہلیہ کے خلاف راولپنڈی کے تھانہ صادق ٓآباد میں مقدمہ درج کرلیا گیا، سی پی او نے ملزمان کو جلد ازجلد گرفتار کرنےکاحکم دیا ہے۔

پولیس کی جانب سے ملزم کی گرفتاری کے لیے پولیس کے جگہ جگہ چھاپے مارے جارہے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں