کراچی کے ساتھ متعصبانہ سلوک بند کیا جائے، ندیم نصرت -
The news is by your side.

Advertisement

کراچی کے ساتھ متعصبانہ سلوک بند کیا جائے، ندیم نصرت

کراچی : متحدہ قومی موومنٹ کے کنوینر ندیم نصرت نے کہاہے کہ رینجرز کوصرف کراچی میں آپریشن کے لئے اختیارات دیناکراچی کے شہریوں کے ساتھ جاری متعصبانہ سلوک کاتسلسل ہے۔

تفصیلات کے مطابق سندھ میں رینجرزکے اختیارات کے معاملے پر اپنے ایک بیان میں ندیم نصرت نے کہاکہ ’’پورا ملک جانتاہے کہ اندرون سندھ کے بیشترعلاقوں میں ہمیشہ سے ڈاکووٴں اور پتھارےداروں کاراج رہاہے جس کی وجہ سے شام کواندرون سندھ کے کسی بھی علاقے یاشاہراہ پر لوگوں کانکلنا ناممکن ہے۔

ندیم نصرت نے مزید کہا کہ ’’اندرون سندھ میں امن و امان کی صورتحال کے پیش نظر رینجرز کی زیادہ ضرورت اندرون سندھ میں ہے لیکن وہاں سندھ حکومت پولیس سے کام لے رہی ہے۔ اگرآج بھی حکومت سندھ یہ سمجھتی ہے کہ وہ پورے سندھ میں دہشت گردوں، ڈاکووٴں، پتھاریداروں، اغوابرائے تاوان کی وارداتیں کرنے والوں اورجرائم پیشہ عناصر پر پولیس کے ذریعے ہی قابو پایا جاسکتا ہے تو پھر صرف کراچی میں رینجرز کو آپریشن کا اختیار کیوں دیا جارہا ہے؟‘‘۔

پڑھیں : رینجرز اختیارات پر وفاق کو کوئی سمری نہیں بھیجی، وزیر اعلیٰ سندھ

انہوں نے کہا کہ ’’اگر اندرون سندھ میں صرف پولیس ہی امن و امان کی صورتحال دیکھ رہی ہے تو پھر کراچی میں پولیس سے ہی کام کیوں نہیں لیا جارہا؟‘‘، رینجرز کو صرف کراچی میں کارروائیوں کی اجازت اور اختیارات دینا کراچی کے شہریوں کے ساتھ متعصبانہ سلوک کا تسلسل ہے‘‘۔

مزید پڑھیں : سندھ رینجرز کے اختیارات میں توسیع، اندرون سندھ کارروائی نہیں‌ کرسکے گی

کنوینر ایم کیو ایم نے سندھ حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ’’کراچی کے لیے اس طرز کے مسلسل یکطرفہ اور متعصبانہ فیصلے کے ذریعے حکومت سندھ خود اس بات کو تسلیم کررہی ہے کہ کراچی کو سندھ سے الگ تصور کرتی ہے۔ حکمران کراچی کے بارے میں اس طرح کے متعصبانہ فیصلے اور پالیسیوں کا نافذ کر کے عوام کو علیحدہ صوبے کا مطالبہ کرنے کی جانب دھکیل رہے ہیں‘‘۔

یہ بھی پڑھیں : وفاق نے رینجرزکوسندھ میں اختیارات دے دیئے، دو نوٹیفکیشن جاری

ندیم نصرت نے کہاکہ’’ آج کراچی اورسندھ کے شہری علاقوں کاہرفرد یہ سمجھنے پر مجبورہے کہ سندھ اور وفاقی حکومت دونوں ہی کراچی کے عوام کے ساتھ متعصبانہ سلوک کررہے ہیں اور انہیں دیوار سے لگایا جارہا ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ کراچی کے ساتھ نفرت اور تعصب کا سلوک بند کیا جائے‘‘۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں