site
stats
صحت

بھارتی فوجی خودکشیوں اور بیماریوں کے باعث مرنے لگے

نئی دہلی: بھارتی فوجیوں کی بڑی تعداد بغیر کسی جنگ میں حصہ لیے خودکشیوں، بیماریوں اور حادثات کے باعث مرنے لگی۔ بھارتی میڈیاکے مطابق ہر سال 2 بٹالین کے برابر فوجی ہلاک ہو رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق خودکشی، بیماری اور حادثات کے سبب بھارتی فوج کی شرح اموات میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق جان گنوانے والے بھارتی فوجیوں کی تعداد 16 سو سالانہ ہوگئی۔ یہ تعداد میدان جنگ اور مختلف آپریشنز میں اہلکاروں کی ہلاکتوں کے مقابلے میں 12 گنا زیادہ ہے۔

بھارتی آرمی چیف بین روات کا کہنا ہے کہ ہرسال 2 بٹالین جتنے فوجیوں کا مرنا تشویش کی بات ہے۔

مزید پڑھیں: خودکشی سے بچانے والا پنکھا تیار

سنہ 2014 سے اب تک بھارت کی فوج، بحریہ اور فضائیہ کے 6 ہزار 5 سو اہلکار ہلاک ہوچکے ہیں۔

کچھ عرصہ قبل ایک بھارتی فوجی اہلکار تیج بہادر یادیو نے سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو بھی جاری کی تھی جس میں اس نے بھارتی فوجی اہلکاروں کے ساتھ ہونے والے ناروا سلوک کا پردہ فاش کردیا تھا۔

تیج بہادر کا یہ بھی کہنا تھا کہ فوجیوں کو مناسب خوراک نہیں دی جارہی اور اکثر انہیں رات کو بھوکا سونا پڑتا ہے جس کی وجہ سے وہ اپنی ڈیوٹیاں انجام دینے میں مشکل کا شکار ہیں۔

یاد رہے کہ کچھ عرصہ قبل عالمی ادارہ صحت ڈبلیو ایچ او کی جانب سے جاری کردہ ایک رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں ذہنی تناؤ کے باعث سب سے زیادہ خودکشیاں بھارت میں ہوتی ہیں۔

گویا بھارت میں صرف فوجیوں میں ہی نہیں بلکہ عام افراد میں بھی خودکشی کا رجحان تیزی سے بڑھ رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق ذہنی امراض کا شکار افراد میں سے ڈپریشن کے تقریباً 50 فیصد مریض بھارت، چین اور جنوب مشرقی ایشیا میں موجود ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top