The news is by your side.

Advertisement

سکھر: سنگ دل بیٹوں کا بہیمانہ تشدد، بوڑھی ماں کو کچرے کے ڈھیرپرپھینک گئے

سکھر : سنگدل اور بد نصیب بیٹوں نے بوڑھی ماں پر بہیمانہ تشدد کرکے بے ہوشی کی حالت میں کھلے آسمان تلے کچرے کے ڈھیر پر پھینک دیا، بوڑھی ماں کا جرم بیٹوں سے دو وقت کی روٹی مانگنا تھا۔

تفصیلات کے مطابق سکھر کے علاقے بس ٹرمینل کے قریب سنگدل بیٹے بوڑھی ماں کو تشدد کے بعد نیم بے ہوشی کی حالت میں کچرے کے ڈھیر پر پھینک گئے،80 سالہ بوڑھی خاتون کئی گھنٹے تک کچرے کے ڈھیر پر روتی تڑپتی رہی کچھ خدا ترس لوگوں نے بوڑھی خاتون کو اٹھا کر طبی امداد کے لئے سول اسپتال پہنچایا۔

اے آر وائی نیوز پر خبر نشر ہو نے کے بعد سربراہ بحریہ ٹاؤن ملک ریاض نے فوری ایکشن لیتے ہوئے80 سالہ بوڑھی خاتون کا بیڑا اٹھا لیا، خاتون کو فوری طور پر لاہور بحریہ ٹاؤن اولڈایج ہوم منتقل کرنے کے احکامات جاری کر دیئے۔

ملک ریاض کی بحریہ ٹاؤن کی ٹیم کچھ دیر بعد کراچی سے سکھر پہنچ کر بوڑھی خاتون کو لاہور اولڈ ایج ہوم منتقلی کے لئے لے جائیں گے چار گھنٹے گزرجانے کے بعد پولیس حسبِ روایت تاخیر سے اسپتال پہنچی، بوڑھی خاتون کو اس وقت لیڈی کانسٹیبل کی نگرانی میں سکھر سول اسپتال میں رکھا ہوا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں