The news is by your side.

جاپانی کُشتی "سُومو” کے گرانڈ چمپیئن نے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا، ویڈیو دیکھیں

ٹوکیو : جاپان کی روایتی کُشتی سُومو کے یوکوزُونا یا گرانڈ چمپیئن ہاکُوہو نے ریٹائر ہونے کے اپنے ارادے سے جاپان سُومو ایسوسی ایشن کو مطلع کر دیا ہے۔

اس حوالے سے غیر ملکی خبر رساں﷽ ادارے کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ "ہاکُوہو” نے فیصلہ کیا تھا کہ وہ اپنے دائیں گھٹنے کے زخم کے باعث 15 روزہ گرینڈ ٹورنامنٹ میں بطور یوکوزُونا تمام مقابلوں میں حصہ نہیں لے سکیں گے۔

رواں سال مارچ میں ہونے والے ٹورنامنٹ میں 36 سالہ "ہاکُوہو” اپنا دایاں گھٹنا زخمی ہونے کے باعث تیسرے روز ہی ٹورنامنٹ سے دستبردار ہو گئے تھے اور اُن کا آپریشن ہوا تھا، یہ مسلسل چھٹا ٹورنامنٹ تھا جس سے وہ دستبردار ہوئے۔

ہاکُوہو نے رواں سال جولائی میں منعقد ہونے والے ٹورنامنٹ میں اپنے یوکوزُونا اعزاز کے ساتھ حصہ لیا اور ٹورنامنٹ میں فتح یاب قرار پائے تھے۔ یہ ان کا 45 واں اعزاز تھا۔

Record-breaking sumo champ Hakuho to retire: reports | - GeoSuper.tv

ٹورنامنٹ کے بعد ہاکُوہو نے میڈیا کو بتایا تھا کہ ان کی جسمانی حالت کافی خراب تھی اور وہ اپنے کیریئر پر احتیاط کے ساتھ غور کریں گے۔

منگولیا میں پیدا ہونے والے ہاکُوہو کی عمر اس وقت 36 سال ہے اور وہ 15 برس کی عمر میں میاگِینو اکھاڑے سے وابستہ ہوئے تھے۔

Grand champions Hakuho and Kakuryu told to heal themselves before next  tournament | The Japan Times

وہ اپنی لچکداری، قوت اور ماہرانہ داؤ پیچ کی بدولت سال2007 میں سُومو کے اعلیٰ ترین درجے یوکوزُونا تک پہنچے تھے۔

ہاکُوہو نے سال2019 میں جاپانی شہریت حاصل کی تھی، ان کا کہنا تھا کہ سُومو کی دنیا کا احسان چکانے کے لیے وہ مستقبل میں اپنا اکھاڑہ قائم کرکے مزید طاقتور سُومو پہلوان تیار کرنا چاہتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں