The news is by your side.

Advertisement

سوئمنگ پول سے کورونا وائرس پھیلتا ہے یا نہیں؟

ریاض : سعودی وزارت صحت نے کہا ہے کہ سوئمنگ پول کے مشترکہ استعمال سے نئے کورونا وائرس ایک شخص سے دوسرے میں منتقل نہیں ہوتا۔

سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق وزارت صحت سے دریافت کیا گیا تھا کہ سوئمنگ پول میں نہانے سے کورونا وائرس ایک شخص سے دوسرے کو لگ جاتا ہےجبکہ سوئمنگ پول میں متعدد افراد موجود ہوتے ہیں۔

وزارت صحت نے ٹویٹر پر اس سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ اصولی بات یہ ہے کہ سوئمنگ پول سے کورونا وائرس منتقل نہیں ہوتا۔ ابھی تک اس کے برخلاف کوئی بات معتبر میڈیکل جائزے کے ذریعے سامنے نہیں آئی ہے۔

بیان میں کہا گیا کہ جہاں تک کورونا سے متاثرہ افراد کی چھینک یا کھانسی کی پھوار سے وائرس کی منتقلی کا معاملہ ہے تو یہ مصدقہ امر ہے۔ اسی طرح وائرس سے آلودہ سطح چھو کر آنکھ یا ناک یا منہ چھونے سے وائرس منتقل ہوجاتا ہے۔

مزید پڑھیں : چین میں کورونا مریض سوئمنگ پول میں نہانے چلا گیا، 8 افراد متاثر

واضح رہے کہ کورونا وائرس سے بچاو کے لیے عائد پابندیاں ختم ہونے کے بعد گرمی سے نجات کے لیے بیشتر افراد سوئمنگ پولز کا رخ کر رہے ہیں لیکن ماہرین کا کہنا ہے کہ سوئمنگ کے دوران بھی احتیاطی تدابیر پر عمل کرنا لازمی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں