site
stats
پاکستان

پاناما لیکس اور مقبوضہ کشمیر سے توجہ ہٹانے کے لیے سانحہ کراچی کروایا گیا، طاہر القادری

لاہور: ڈاکٹر علامہ طاہر القادری نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر اور پانامہ لیکس پر سے توجہ ہٹانے کے لیے سازش کے تحت سانحہ کوئٹہ کے بعد سانحہ کراچی کروایا گیا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈی جی خان میں نکالی گئی تحریک قصاص کے مظاہرین سے ٹیلی فونک خطاب کرتے ہوئے کیا، ڈاکٹر علامہ طاہر القادری کا کہنا تھا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن میں بے گناہ افراد کو گرفتار کیاگیا، تحریک قصاص شروع ہونے کے بعد بھی منہاج القرآن کے کارکنان کو گرفتار کیا گیا اور عہدیداران کو نوٹس بھیجے گئے مگر انتظامیہ نے آج تک سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ملوث افراد کو کوئی نوٹس نہیں بھیجا۔

پڑھیں:  چاہیں تو 7 دن میں قاتلوں سے بدلہ لے سکتے ہیں، طاہر القادری

ڈاکٹر طاہر القادری کا کہنا تھا کہ ’’سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ملوث افراد کو مراعات اور ترقیاں دی گئیں تاکہ وہ وعدہ معاف گواہ نہ بن جائیں ، ماڈل ٹاؤن آپریشن میں براہ راست حصہ لینے اور ہدایات لینے والے افراد کو بھی باہر بھیج دیا گیا۔ طاہر القادری نے انکشاف کیا کہ ’’سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ملوث توقیر شاہ جو شہباز شریف سے اُس روز ہدایات لے رہے تھے اُسے بیرون ملک بھیج دیا گیا اور آپریشن میں براہ راست حصہ لینے والے سلمان شاہ کو بھی جے آئی ٹی نے دو سال کے لیے بیرونِ ملک بھیج دیا‘‘۔

مزید پڑھیں:    تحریک قصاص حکمرانوں کو منطقی انجام تک پہنچائے گی، طاہر القادری

سربراہ پاکستان عوامی تحریک نے کہا کہ ’’جعلی جے آئی ٹی کے ذریعے انصاف کا قتل کیا گیا، مگر ہمیں امید ہے کہ انشاء اللہ اب حکمرانوں کو بھاگنے کا موقع نہیں ملے گا۔ ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ 28 اگست کو فائنل دھرنا راولپنڈی میں دیا جائے گا جس میں ایک بہت بڑا انکشاف کروں گا‘‘۔

طاہر القادری نے انکشاف کیا کہ ’’پانامہ لیکس سے توجہ ہٹانے کے لیے سانحہ کوئٹہ ایک سازش کے تحت کروایا گیا بعد ازاں اسمبلی میں اپنے اتحادیوں سے اداروں کے خلاف ہرزہ سرائی کروائی گئی مگر عوام مقبوضہ کشمیر اور پاناما لیکس کو نہیں بھولی تو سانحہ کراچی کروایا گیا جس میں وطن کے خلاف سخت زبان استعمال کروائی گئی‘‘۔

We would not rest unless we get Qisas for the… by arynews

کراچی پریس کلب کے باہر پاکستان کے خلاف متنازعہ تقریر اور میڈیا ہاؤسز پر حملوں کے حوالے سے ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ ’’الطاف حسین کی تقریر اور ملک کے خلاف نعرے قابل مذمت ہیں اور ان نعروں سے عوام کے دل دکھے ہیں مگر دیکھنا یہ ہیں کہ یہ کلمات قائد ایم کیو ایم نے خود ادا کیے یا پھر یہ تقریر کروائی گئی ہے‘‘۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top