The news is by your side.

Advertisement

طالبان کا امریکی فضائیہ کا طیارہ مار گرانے کا دعویٰ

کابل: افغان طالبان نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے ملک کے مشرقی حصے میں امریکی فضائیہ کا طیارہ مار گرایا ہے جس کے نتیجے میں تمام سوار افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق افغان طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد اور اس تنظیم سے وابستہ ایک مقامی صحافی طارق غزنوی کا کہنا ہے کہ مشرقی حصے میں تباہ ہونے والا طیارہ امریکی فضائیہ کا ہے۔

خبر رساں ادارے کو طارق غزنوی نے بتایا کہ اس نے تباہ شدہ طیارے کا ملبہ دیکھا ہے جس میں آگ نکل رہی تھی، ملبے کے ساتھ دو جھلسی ہوئی لاشیں بھی جائے وقوعہ پر پڑی ہیں، طیارہ مکمل طور پر تباہ ہو چکا ہے اور تباہ شدہ طیارے کے ٹکڑوں پر امریکی فضائیہ کا مونوگرام نظر آ رہا ہے۔

مقامی صحافی کا کہنا ہے کہ طیارہ امریکی اڈے سے 10 کلومیٹر دوری پر تباہ ہوا۔

طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا ہے کہ امریکی فضائیہ کا طیارہ غزنی صوبے میں مار گرایا اور اس میں سوار تمام افراد ہلاک ہوگئے ہیں تاہم انہوں نے حتمی طور پر ہلاکتوں کی تعداد کے بارے میں کچھ نہیں بتایا۔

امریکی سینٹرل کمانڈ کی ترجمان میجر بیتھ ریاورڈن نے طالبان کے دعوے پر ردعمل دینے سے گریز کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی تفتیش کار طیارہ کریش ہونے کے معاملے کی تفتیش کر رہا ہے لیکن ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ تباہ ہونے والے طیارہ ملٹری کا تھا۔

بعدازاں ایک اعلیٰ ملٹری افسر نے طیارے تباہ ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے خبررساں ادارے کو بتایا کہ امریکی فضائیہ کا طیارہ تکنیکی خرابی کے باعث گر کر تباہ ہوا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں