The news is by your side.

Advertisement

افغان تنازع، امریکا بات چیت کے لیے مستقبل میں سنجیدہ رہے: طالبان کا مطالبہ

کابل: افغان طالبان کی جانب سے امریکا سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ تنازعے کے حل کے لیے مستقبل میں‌ سنجیدگی کا مظاہرہ کرے.

تفصیلات کے مطابق افغان طالبان نے بات چیت کے عمل کو جاری رکھنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ فریق اس ضمن میں مرکوز اور سنجیدہ رہے.

یہ بیان طالبان کے لیڈر ملا ہیبت اللہ اخوند زادہ کی جانب سے سامنا آیا. انھوں نے اپنے خصوصی پیغام میں یہ مطالبہ کیا.

ہیبت اللہ اخوند زادہ نے مزید کہا کہ امریکا کو مذاکرات میں دلیل اور تفہیم کی پالیسی اپنانے کی ضرورت ہے، ساتھ ہی طالبان کی مذاکرات کی تجویز کو قبول کرے۔

پیغام میں‌ انھوں نے کہا کہ طالبان مذاکراتی عمل میں پیش رفت کے لیے غیر ملکی افواج کے انخلا کو اہم خیال کرتے ہیں۔

مزید پڑھیں: سابق افغان صدر کا طالبان کے ساتھ معاہدے کا دعویٰ غلط نکلا

خیال رہے کہ طالبان اور امریکا کے درمیان مذاکرات کا آخری دور مئی میں مکمل ہوا تھا، طالبان نے ماسکو میں روسی حکومت سے بھی مذاکرات کیے تھے.

اس موقع پر بھی طالبان نے یہی موقف اختیار کیا کہ افغانستان میں قیامِ امن سے متعلق کسی بھی معاہدے پر اتفاق کے لئے بین الاقوامی افواج کا انخلاء انتہائی ضروری ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں