The news is by your side.

Advertisement

کیا طالبان ایرانی طرز حکومت اپنائیں گے؟

کابل: امریکی ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ طالبان ایرانی طرز حکومت اپناتے ہوئے سپریم لیڈر چنیں گے۔

تفصیلات کے مطابق افغانستان میں طالبان نئی حکومت بنانے کی کوششوں میں ہیں، ادھر ایک امریکی ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ طالبان ایرانی حکومت کی طرح اپنے گروپ کے سربراہ ھبۃ اللہ اخونزادہ کو سپریم لیڈر نامزد کریں گے۔

فرانسیسی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کے مطابق طالبان ایرانی طرز حکومت میں دل چسپی رکھتے ہیں جس میں صدر اور کابینہ تو موجود ہوتے ہیں مگر سپریم لیڈر بطور مذہبی رہنما تمام اختیارات اپنے پاس رکھتے ہیں۔

سپریم لیڈر صدر کے احکامات کو بھی ناقص العمل قرار دے سکتے ہیں اور وہی تمام فیصلوں میں سب سے طاقت ور آواز رکھتے ہیں۔

طالبان کے سپریم لیڈر کی نئی تصویر وائرل، سوشل میڈیا پر چرچے

طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا ہے کہ ملا ھبۃ اللہ افغانستان کے صوبے قندھار میں موجود ہیں، اور وہ شروع سے وہیں مقیم ہیں۔

طالبان رہنما عباس ستنکزئی کا کہنا ہے کہ افغانستان میں طالبان حکومت کا اعلان آئندہ 24 سے 48 گھنٹے میں متوقع ہے. انھوں نے کہا ہے کہ طالبان حکومت میں پرانے چہرے شامل نہیں ہوں گے، ہر قومیت کے نئے اہل افراد کو نئی حکومت کا حصہ بنایا جائے گا۔

انھوں نے دعویٰ کیا ہے کہ طالبان حکومت میں سرکاری اداروں میں خواتین کی نمائندگی ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں