The news is by your side.

Advertisement

بیٹے کی موت : والدین نے ایسا کام کردیا کہ دیکھنے والے بھی رو پڑے

تامل ناڈو : بھارت میں بے بس والدین نے اپنے بیٹے کی موت کے بعد اس کی یادیں زندہ رکھنے کیلیے ایسا کام کیا کہ دیکھنے والے بھی غمزدہ ہوگئے۔

کسی بھی حادثے میں اپنے پیارے کو کھودینا یقینی طور پر سب سے زیادہ تکلیف دہ چیز ہے جس سے کوئی بھی گزر سکتا ہے، اس نقصان سے زندگی میں جوخلاء پیدا ہوجاتا ہے وہ کبھی پورا نہیں ہوسکتا۔

ہر انسان اپنے عزیز کی موت کے بعد اس کا غم اپنے انداز سے مناتا ہے جس سے اس کی اس م،رحوم سے محبت کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے۔

silicone statue of boy

کچھ ایسا ہی بھارتی ریاست تامل ناڈو میں ہوا کہ جہاں ایک خاندان نے ٹریفک حادثے میں اپنے پیارے بیٹے کوکھونے کے بعد اس بات کو یقینی بنایا کہ وہ اس کی غیرموجودگی کو کبھی محسوس نہیں ہونے دیں گے۔

پنڈ دورائی نامی 24 سالہ نوجوان سال 2020میں ایک سڑک حادثے میں اپنی جان گنوا بیٹھا اس کی موت کی اطلاع والدین کیلیے کسی قیامت سے کم نہیں تھی۔

statue of boy

کئی دن اس غم میں مبتلا رہنے کے بعد جب خاندان کے افراد نے اس حقیقت سے سمجھوتہ کرلیا کہ پنڈ دورائی اب ان کے ساتھ نہیں رہا تو انہوں نے اس کی یادوں کو محفوظ رکھنے کیلئے اس کا مجسمہ بنوا لیا۔

والدین نے اس کا مجسمہ اس کے کمرے میں رکھوا لیا ہے جہاں وہ اکثر بیٹھ کر ٹی وی دیکھا کرتا تھا، نوجوان کے والد کا کہنا تھا کہ میں اب خوش ہوں کہ میں اپنے بیٹے کو دیکھ سکتا ہوں، حالانکہ یہ ایک سیلیکون سے بنا مجسمہ ہے۔

متوفی کی والدہ کا کہنا تھا کہ ان کا بیٹا ہمیشہ کمرے میں ٹیلی ویژن دیکھتے ہوئے دیکھا جاتا تھا لہذا یہ مناسب اقدام تھا کہ اس کے مجسمے کو اسی کمرے میں رکھا جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں