site
stats
پاکستان

ٹارگٹ کلر کاشف ڈیوڈ کے سنسنی خیز انکشافات، 30 افراد کے قتل کا اعتراف

کراچی: گرفتار شدہ ٹارگٹ کلر کاشف عرف ڈیوڈ نے ابتدائی تفتیش کے دوران سنسنی خیز انکشافات کیے ہیں۔ اس نے پولیس اہلکاروں اور مسلم لیگ ن کے رہنما سمیت تیس افراد کے قتل کا عتراف کیا۔

تفصیلات کے مطابق گذشتہ رات گرفتار کیے جانے والے ٹارگٹ کلر کاشف عرف ڈیوڈ نے ابتدائی تفتیش کے دوران انکشاف کیا ہے کہ وہ پولیس اہلکاروں، پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما زوہیر اکرم ندیم اور بہاری قومی موومنٹ کے رہنما آفتاب ملک سمیت 30 سے زائد افراد کے قتل میں ملوث ہے۔

کاشف ڈیوڈ کےا نکشافات کے مطابق وہ 1995 سے بدنام زمانہ ٹارگٹ کلر اجمل پہاڑی کی ٹارگٹ کلنگ ٹیم کا حصہ تھا۔ وہ 2005 سے متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی اور کراچی تنظیمی کمیٹی کے کہنے پر اپنی ٹارگٹ کلنگ ٹیم بھی چلا رہا تھا۔ ملزم سے مزید تفتیش جاری ہے۔

کاشف کو گزشتہ صبح قانون نافذ کرنے والے ادارے کی جانب سے عزیز آباد سے گرفتار کیا گیا تھا۔ چھاپے کے دوران کاشف کے پاس سے بھاری مقدار میں اسلحہ بھی برآمد کیا گیا۔

رینجرز نے ملزم کا 30 روزہ ریمانڈ حاصل کیا ہے۔ عدالت نے ملزم سے تفتیش کے لیے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم یعنی جے آئی ٹی بنانے کا بھی حکم دیا ہے۔

رینجرز کے مطابق ملزم کا تعلق متحدہ قومی موومنٹ سے ہے اور وہ لوٹ مار، آتش زنی، بھتہ خوری اور غیر قانونی اسلحہ رکھنے سمیت متعدد جرائم میں ملوث ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top