The news is by your side.

Advertisement

مالی سال 20-2019: پہلی سہ ماہی میں سندھ سے 1836 کروڑ روپے ٹیکس وصول

کراچی: رواں مالی سال کی پہلی سہ ماہی جولائی تا ستمبر میں صوبہ سندھ سے 1836 کروڑ 60 لاکھ روپے ٹیکس کی مد میں وصول ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و انسداد منشیات مکیش کمار چاؤلہ کی زیر صدارت اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں جولائی سے ستمبر تک ٹیکس وصولی کی رپورٹ پیش کی گئی۔

رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال کی پہلی سہ ماہی میں 1836 کروڑ 60 لاکھ ٹیکس وصول ہوئے۔ موٹر وہیکل ٹیکس کی مد میں 168 کروڑ 40 لاکھ روپے جمع ہوئے۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ انفراسٹرکچر سیس کی مد میں 1408 کروڑ 70 لاکھ روپے جمع ہوئے، پروفیشنل ٹیکس کی مد میں 17 کروڑ 70 لاکھ سے زائد جمع ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق کاٹن فیس کی مد میں 2 کروڑ 70 لاکھ اور جائیداد ٹیکس 105 کروڑ روپے وصول ہوئے جبکہ انٹرٹینمنٹ ڈیوٹی کی مد میں 2 کروڑ 40 لاکھ روپے سے زائد وصول ہوئے۔

صوبائی وزیر مکیش کمار چاؤلہ نے ہدایت کی کہ ٹیکس وصولی کی کارکردگی کو ماہانہ بنیاد پر مانیٹر کیا جائے۔

اس سے قبل فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کے چیئرمین شبر زیدی نے کہا تھا کہ رواں مالی سال کی پہلی سہ ماہی کے بڑے ٹیکس ہدف کا 90 فیصد حاصل کرلیا گیا ہے۔

شبر زیدی کے مطابق رواں مالی سال جولائی تا ستمبر 960 ارب روپے کی ٹیکس وصولی ہوئی، کچھ مزید ایڈجسٹمنٹ کی توقع ہے۔ مقامی ٹیکس محصولات میں بھی 25 فیصد اضافہ دیکھا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں