پیٹرولیم مصنوعات پر ٹیکس میں اضافہ، عوام فائدے سے محروم -
The news is by your side.

Advertisement

پیٹرولیم مصنوعات پر ٹیکس میں اضافہ، عوام فائدے سے محروم

اسلام آباد: حکومت نے ایک لیٹر ڈیزل کی فروخت پر سیلز ٹیکس کی شرح پچاس فیصد کی بلند ترین سطح پر کر دی ہے.

عالمی منڈی میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کے باوجود پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی نہیں کی گئی بلکہ ٹیکس میں اضافہ کر دیا، پیٹرولیم مصنوعات پر ٹیکسوں میں اضافہ کرکے حکومت ایک ماہ میں تیرہ ار ب روپے عوام کی جیب سے نکال لے گی۔

اس وقت ہائی اسپیڈ ڈیزل پر سیلز ٹیکس کی شرح تاریخ کی بلند ترین سطح یعنی پچاس فیصد تک جاپہنچی ہے، حکومت پیٹرول پر چھیبس فیصد ،لائٹ اسپیڈ ڈیزل پر ساڑھے تیس فیصد سیلز ٹیکس وصول کر رہی ہے.

حکومت نے غریبوں کو بھی نہیں چھوڑا، مٹی کے تیل پر بھی سیل ٹیکس کی شرح تیس فیصد تک جا پہنچی ہے، اس کے علاوہ حکومت اس وقت ایک لیٹر پیٹرول پر تقریبا دس روپے اور ایک لیٹر مٹی کے تیل پر تین روپے ستر پیسے پیٹرولیم ڈیولپمنٹ لیوی کی مد میں لے رہی ہے.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں