The news is by your side.

Advertisement

نیوزی لینڈ کے خلاف ٹیم سلیکشن پر ماہرین حیران

لاہور: نیوزی لینڈ کے خلاف ٹیم کا اعلان تو کر دیا گیا ہے لیکن چیف سلیکٹر محمد وسیم کی سلیکشن پر ماہرین حیران ہیں۔

تفصیلات کے مطابق نیوزی لینڈ کے خلاف ون ڈے سیریز کے لیے قومی ون ڈے اسکواڈ میں اکھاڑ پچھاڑ اور سلیکشن کے معیار پر ماہرین کرکٹ حیران ہو گئے ہیں۔

پرفارمنس دینے والے چیف سلیکٹر محمد وسیم کو متاثر نہ کر سکے، اور پرفارمنس نہ دینے والوں کی ٹیم میں انٹری ہو گئی ہے، خوشدل شاہ کی پاکستان ون ڈے کپ میں کوئی کارکردگی نہیں تھی لیکن وہ ٹیم کا حصہ بن گئے۔

پاکستان ون ڈے کپ کے ٹاپ فائیو اسکورر طیب طاہر 666 ، خرم منظور 665، مختار احمد 597، صاحبزادہ فرحان 487 اور شان مسعود 472 رنز بنا کر بھی ٹیم میں جگہ نہ بنا سکے۔

بورڈ کے متوقع چیئرمین رمیز راجہ سے ملاقات کیسی رہی؟ کپتان نے بتا دیا

پورے سال انڈر نائٹین ٹیم کے کپتان روحیل نذیر کو فیوچر اسٹار کہتے رہے، ون ڈے کپ میں روحیل کے 8 میچز میں 352 رنز تھے لیکن موقع 289 رنز بنانے والے محمد حارث کو دے دیا گیا۔

سابق کپتان سرفراز احمد کو پہلے بینچ پر بٹھایا، پھر ٹیم سے باہر کر دیا، سلمان علی آغا بغیر کھیلے ہی ڈراپ ہو گئے، شاہنواز داھانی نے پی ایس ایل ٹی ٹوئنٹی میں پرفارم کیا لیکن سلیکٹ ہوئے ٹیسٹ میں، جب وہاں نہیں کھیلے تو ون ڈے میں ایڈجسٹ کر دیے گئے۔

چیف سلیکٹر کی وضاحت

چیف سلیکٹر محمد وسیم نے نیوزی لینڈ کے خلاف قومی اسکواڈ کے لیے کھلاڑیوں کی سلیکشن کی حکمت عملی کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ ٹیم میں نئے کھلاڑیوں سمیت محمد حارث، محمد وسیم، شاہنواز دھانی اور زاہد محمود کو ڈومیسٹک کرکٹ میں پرفارم کرنے پر لیا گیا۔

انھوں نے کہا خوشدل شاہ اور افتخار احمد کو پھر بلایا گیا، ہم نے سلیکشن پر کافی مشاورت کی، مڈل آرڈر کا مسئلہ ہمارے مد نظر رہا، اسے بہتر کرنے کے لیے ہم نے نئے کھلاڑیوں کو موقع دینے کا فیصلہ کیا۔

نیوزی لینڈ کے خلاف قومی کرکٹ ٹیم کا اعلان

چیف سلیکٹر نے کہا کہ جو بیٹسمین منتخب کیے گئے ہیں تو اس کمبنیشن کے پیچھے ایک سوچ ہے، اس سلسلے میں دائیں اور بائیں ہاتھ سے کھیلنے والے کھلاڑیوں کا توازن ہم نے مدنظر رکھا، اس کمبنیشن میں نئے اور تجربہ کار کھلاڑی دونوں نظر آئیں گے۔

انھوں نے شاہنواز داھانی کے حوالے سے بتایا کہ وہ ریڈ اور وائٹ بال دونوں میں اچھا پرفارم کر چکے تھے، محمد وسیم انٹرنیشنل اور ڈومیسٹک کرکٹ میں اچھا کھیلے جس پر وہ ہمارے آٹومیٹک چوائس تھے، زاہد محمود کو ماضی میں بدقسمتی سلیکٹ نہیں کیا گیا، ہم نے اسپن بولنگ کے ڈیپارٹمنٹ کو بہتر کرنے کے لیے انھیں سلیکٹ کیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں