The news is by your side.

Advertisement

بھارت نے 22 حریت پسندوں کو انتہاپسند قرار دے کر ہٹ لسٹ تیار کی ہے، تہمینہ جنجوعہ

اسلام آباد: سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ کا کہنا ہے کہ بھارت  نے 22حریت پسندوں کو انتہا پسند قرار دیا ہے اور لسٹ تیار کی ہے، 22 شخصیات کو نشانہ بنایا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں سینیٹ قائمہ کمیٹی کشمیر و گلگت بلتستان کا اجلاس ہوا، سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے قائمہ کمیٹی امور کشمیر و گلگت بلتستان کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے ہر عالمی فورم پر مسئلہ کشمیر بھرپور اجاگر کیا، سفیروں کو انسانی حقوق کمیٹی کی رپورٹ پر بریفنگ دیں گے۔

تہمینہ جنجوعہ کا کہنا تھا کہ بھارت انسانی حقوق کونسل کی رپورٹ پربوکھلاہٹ کاشکارہے، رپورٹ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت عیاں کردی، انسانی حقوق کونسل کی رپورٹ سے پاکستانی مؤقف کو تقویت ملی۔

سیکرٹری خارجہ نے کہا کہ بھارت نے 22حریت پسند شخصیات کی لسٹ تیار کی ہے اور انھیں انتہا پسند قرار دیا ہے، بھارت کی جانب سے22شخصیات کو نشانہ بنایا جائے گا۔

سینیٹر عبدالقیوم نے مسئلہ کشمیر پر پارلیمنٹ کی مشترکہ کمیٹی کے قیام کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ مشترکہ کمیٹی اراکین سینیٹ وقومی اسمبلی پر مشتمل ہو۔

قائمہ کمیٹی نے کشمیر میں بھارتی مظالم کے خلاف قرارداد منظور کرلی اور اقوام متحدہ سے انسانی حقوق رپورٹ پر فوری کارروائی کا مطالبہ کردیا۔

اس سے قبل کنوینر کل جماعتی حریت کانفرنس آزاد کشمیرغلام محمد نے کمیٹی کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کشیدہ ہوتی جارہی ہے، بھارت تحریک آزادی کو دہشت گردی سے جوڑنے کی کوشش کر رہا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں