site
stats
اہم ترین

شارع فیصل پر بد ترین ٹریفک جام

کراچی: واٹر ٹینکر مالکان کی جانب سے احتجاج کے باعث شارع فیصل پربدترین ٹریفک جام ہو گیا ہے،ٹریفک جام میں 15 ایمبولینسیں پھنس گئیں ہیں،جب کہ معروف باکسرمحمد عامر بھی ٹریفک جام میں پھنس گئے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کی معروف اور مصروف ترین شاہراہ ،شارع فیصل پر واٹر ٹینکر مالکان کی جانب سے جاری احتجاج کے باعث شاہراہ فیصل، نرسری،ڈرگ روڈ،اسٹیڈیم روڈ اور حسن اسکوائر سمیت اطراف کی تمام چھوٹی بڑی سڑکوں پر گاڑیوں کی قطاریں لگنے سے بدترین ٹریفک جام ہو گیا ہے۔

7

یاد رہے ٹریفک پولیس کی جانب سے کل اعلان کیا گیا تھا کہ ڈرگ روڈ پل کو مرمت کے باعث بند کردیا جائے گا، جس کے باعث ٹریفک شاہراہ فیصل پر منتقل ہو گیا تھا،جہاں واٹر ٹینکرز مالکان کی جانب سے احتجاج کے طور پر ٹینکرز کو شاہراہ فیصل پرکھڑے کر دینے سے پوری شاہراہ پر بدترین ٹریفک جام ہو گیا ہے۔

واضع رہے شام کے اوقات میں صدر اور شاہراہ فیصل پر واقع دفاترسے گھر جانے والے ملازمین کی اس شاہراہ کو استعمال کرنے کے باعث ویسے ہی ٹریفک کا اژد ہام رہتا ہے،جب کہ ائیرپورٹ سے آنے اور ائیرپورٹ کے لیے جانے والے افراد بھی یہی شاہراہ استعمال کرتے ہیں۔

5

دوسری جانب ایدھی کے ترجمان نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ 10 سے 15 مریض ٹریفک جام میں پھنس گئے ہیں،جن میں سے 4 حالت نہایت تیشوشناک ہے،جنہیں فوری طور پر ہسپتال منتقل کرنا ضروری ہے۔

ٹریفک جام کے بعد کراچی ٹریفک پولیس کے ترجمان نے ہدایت جاری کی ہیں کہ ائیر پورٹ سے آنے والے مسافر کارساز والا راستہ اختیار کریں، جب کہ صدر سے جانے والے افراد شاہراہ قائدین والی سڑک استعمال کریں۔

4

اس موقع پر ڈی آئی جی ٹریفک عامر نورانی کا کہنا تھا کہ انہیں واٹر ٹینکرز کے احتجاج کی پیشگی اطلاع نہیں تھی، تاہم ٹریفک کانسٹیبلز ٹریفک بحال کرنے کی ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں۔

 

پولیس کے مطابق واٹر ٹینکرز مالکان کی ایسوسی ایشن نے احتجاج کی پیشگی اطلاع نہیں دی تھی، تاہم انتظامیہ ان سے مزاکرات کے لیے پہنچ چکی ہے،مزاکرات کے بعد ٹینکرز سڑک سے ہٹادیے جائیں گے،جس کے بعد ٹریفک کو بحال کردیا جائے گا۔

شارع فیصل کے ٹرریفک جام میں معروف پاکستانی نژاد برطانوی معروف باکسر بھی ٹریفک میں پھنس گئے،لوگوں نے معروف باکسر کو اپنے درمیان دیکھا تو محمد عامر کے ساتھ تصاویر بنوانا شروع کردیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top