The news is by your side.

Advertisement

اسامہ ستی قتل کیس سے دہشت گردی کی دفعات خارج

اسلام آباد :اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت نے اسامہ ستی قتل کیس میں دہشت گردی کی دفعات خارج کردیں اور کیس ڈسٹرکٹ کورٹ بھجوادیا۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت میں اسامہ ستی قتل کیس کی سماعت ہوئی ، سماعت میں جج شاہ رخ ارجمند نے ملزمان کی مقدمے سے دہشت گردی کی دفعات نکالنے کی درخواستوں پر محفوظ فیصلہ سنایا۔

فیصلے میں عدالت نے ملزمان کی مقدمے سےدہشت گردی کی دفعات نکالنےکی درخواستیں منظور کرتے ہوئے کیس سے دہشت گردی کی دفعات خارج کردیں۔

عدالت نے دہشتگردی کی دفعات ہٹاکر کیس ڈسٹرکٹ کورٹ بھجوادیا اور ساتھ ہی گرفتار اے ٹی ایس اہلکار ملزم مدثر کی ضمانت کی درخواست خارج بھی خارج کردی۔

تین روز قبل عدالت نے گرفتار پانچوں پولیس اہلکاروں کی مقدمے سے دہشت گردی کی دفعات نکالنے کی درخواست پر دلائل مکمل ہونے پر فیصلہ محفوظ کیا تھا جبکہ مدعی مقدمہ کے وکیل نے ملزمان کی دہشت گردی کی دفعات نکالنے کی مخالفت کی تھی۔

VO انسداد دہشتگردی عدالت کے جج شاہ رخ ارجمند نے محفوظ شدہ فیصلہ سنایا۔ عدالت نے ملزمان کی مقدمے سے دہشتگردی کی دفعات نکالنے کی درخواستیں منظور کرتے ہوئے گرفتار اے ٹی ایس اہلکار ملزم مدثر کی ضمانت کی درخواست خارج کر دی۔ عدالت نے دہشتگردی کی دفعات ہٹاتے ہوئے کیس ڈسٹرکٹ کورٹ بھیجوا دیا

Comments

یہ بھی پڑھیں