دس سال تک دہشت گردی کے واقعات ہوں گے، ڈی جی انٹیلی جنس بیورو -
The news is by your side.

Advertisement

دس سال تک دہشت گردی کے واقعات ہوں گے، ڈی جی انٹیلی جنس بیورو

اسلام آباد: انٹیلی جنس بیورو کے ڈائریکٹر جنرل آفتاب سلطان کا کہنا ہے کہ ملک میں کالعدم مذہبی جماعتیں داعش کے لئے نرم گوشے رکھتی ہیں۔

ڈی جی آئی بی آفتاب سلطان کا کہنا ہے کہ لشکرجھنگوی اورسپاہ صحابہ جیسی کالعدم مذہبی جماعتیں داعش کے لئے نرم گوشہ رکھتی ہے لہذا ملک میں اگلے آٹھ سے دس سال تک دہشت گردی کے واقعات ہوتےرہیں گے۔

ڈی جی انٹیلیجنس بیورو آفتاب سلطان قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کے اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان سے سینکڑوں کی تعداد میں لوگ شام گئے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان سے داعش کا نیٹ ورک پکڑا گیا ہے، داعش ٹی ٹی پی کے ساتھ بھی مل کرکام کرتی ہے۔

آفتاب سلطان کا کہنا تھا کہ سینیٹرخالد محمود سومرو، جسٹس مقبول باقر، شکارپورامام بارگاہ، ایس ایس پی چوہدری اسلم، بشیربلورحملے کے ملزمان کو آئی بی اے نے گرفتارکیا۔

انہوں نے بریفنگ میں مزید کہا کہ کراچی میں پکڑے جانے والے ٹارگٹ کلرزمیں کچھ کا تعلق سیاسی جماعتوں سے تھا تاہم اب کراچی کی صورتحال میں بہتری آئی ہے۔

ڈی جی انٹیلیجنس بیورو کا کہنا تھا کہ خیبرپختونخواہ سے 581 بڑے دہشتگرد گرفتار کئےجبکہ 84 دہشتگرد مارے گئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں