The news is by your side.

Advertisement

لورالائی حملہ: تین اہل کاروں سمیت 9 افراد شہید، تینوں دہشت گرد ہلاک

لورالائی: بلوچستان میں ڈی آئی جی ژوب رینج کے دفتر پر  دہشت گردوں نے حملہ کیا، جس میں  پولیس اہل کاروں سمیت نو افراد شہید، جب کہ 20 افراد زخمی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق لورالائی میں ہونے والے حملے میں  دہشت گردوں کا مقابلہ کرتے  ہوئے  تین پولیس اہل کاروں نے جام شہادت نوش کیا، جب کہ دو حملہ آور مارے گئے۔

جس وقت حملہ ہوا، ڈی جی آفس میں پولیس میں بھرتی  کے لیے امیدواروں کے ٹیسٹ اور انٹرویو جاری تھے،  حملے کی ابتدا میں فائرنگ اور پھر دو دھماکوں کی آوازیں سنی گئیں۔

تین خود کش بمبار نے سہ پہر ڈی آئی جی کے  دفترمیں داخلےکی کوشش کی تھی، پولیس اہل کاروں نے بروقت کارروائی کر کے دہشت گردوں کو روکا.

پولیس نے ایک خودکش بمبارکو ڈی آئی جی کمپلیکس کےداخلی مقام پرمارگرایا، دو خود کش بمباروں نے کمروں میں گھس کراندھا دھند فائرنگ کی، فائرنگ کے تبادلے کے بعد دونوں دہشت گرد بھی مارے گئے.


وزیر داخلہ بلوچستان میر ضیا لانگو کا موقف

وزیرداخلہ بلوچستان میرضیالانگو اے آر وائی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ دو سے تین دہشت گردوں نےحملہ کیا، حملے میں 9 افراد شہید ہوئے، جن میں  تین پولیس اہل کار  شامل تھے۔

انھوں نے کہا کہ انٹری ٹیسٹ کے لئے آنے والے بچے زخمی ہوئے، سیکیورٹی فورسز نے دہشت گردوں کا جواں مردی سے مقابلہ کیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں