The news is by your side.

کراچی: چینی قونصلیٹ پر حملہ، دہشت گردوں کی شناخت ہوگئی

کراچی: چینی قونصلیٹ پر حملہ کرنے والے تینوں دہشت گردوں کی شناخت ہوگئی جبکہ شہید اہلکاروں کی نماز جنازہ ادا کردی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق چینی قونصلیٹ پر حملہ کرنے والے تینوں دہشت گردوں کی شناخت ہوگئی، ایک حملہ آور کی شناخت خاران کے رہائشی رزاق کے نام سے ہوئی، دوسرے دہشت گرد کی شناخت ازل خان مری عرف سنگت دادا کے نام سے کی گئی جبکہ تیسرے حملہ آور کی شناخت رئیس بلوچ کے نام سے ہوئی ہے۔

حملہ آوروں کی شناخت کے بعد سندھ حکومت نے بلوچستان حکومت سے رابطے کا فیصلہ کیا ہے جس میں دہشت گردوں سے متعلق معلومات شیئر کی جائیں گی۔

شہید اہلکاروں کی نماز جنازہ ادا کردی گئی

دوسری جانب چینی قونصلیٹ پر حملے میں شہید اہلکاروں کی نماز جنازہ ادا کردی گئی ہے، نماز جنازہ میں گورنر سندھ عمران اسماعیل، وزیراعلیٰ سید سید مراد علی شاہ اور آئی جی سندھ کلیم امام نے شرکت کی، نماز جنازہ کے بعد شہداء کو سلامی بھی دی گئی۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے حملے کی فوری تحقیقات اور سہولت کاروں کی گرفتاری کا حکم دیتے ہوئے شہید ہونے والے اہلکاروں کے اہلخانہ کا خیال رکھنے کی ہدایت کی ہے۔

کالعدم تنظیم بی ایل اے نے حملے کی ذمہ داری قبول کرلی

سی پیک کے خلاف بھارت کا پاکستان مخالف عناصر سے گٹھ جوڑ سامنے آگیا ہے، بھارت نواز کالعدم تنظیم بی ایل اے نے چینی قونصلیٹ پر حملے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے۔

واضح رہے کہ بھارتی جاسوس کلبھوشن بھی بلوچستان میں پکڑا گیا، کلبھوشن پاکستان میں دہشت گردی کرانے کا اعتراف کرچکا ہے، پاکستان اقوام متحدہ میں کلبھوشن کے اعتراف پر مبنی ڈوزیئر دے چکا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں