site
stats
سندھ

زیادتی و قتل کے ملزم کو پھانسی دے دی گئی

حیدر آباد : سینٹرل جیل حیدر آباد میں زیادتی کے بعد لڑکی کو قتل کرنے والے سکندر علی جویو کو سزائے موت دے دی گئی.

تفصیلات کے مطابق سزائے موت کے منتظر قیدی سکندر علی جویو کی پھانسی کی سزا پر مجسٹریٹ اظہر کی موجودگی عمل درآمد کروا دیا گیا اور مجرم کی موت کی تصدیق کے بعد لاش لواحقین کے حوالے کردی گئی.

ملزم سکندرعلی جویو پر دادو اپنے خاندان کی ایک لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد قتل کرنے کا مقدمہ 2000 میں درج کرایا گیا تھا جس کے بعد ملزم کو گرفتار کرنے کے بعد کیس چلایا گیا.

ملزم نے اس دوران مقتولہ کے اہل خانہ سے معافی نامہ کرنے کی کوشش بھی کی تاہم اہل خانہ نے کسی قسم کے راضی نامے سے انکار کردیا تھا جس کے بعد ایڈیشنل ڈسٹرکٹ کورٹ کے جج نے ملزم کو سزائے موت سناتے ہوئے ڈیتھ وارنٹ جاری کیے تھے.

ملزم نے پھانسی کی سزا کے خلاف سندھ ہائی کورٹ سے بھی رجوع کیا تاہم وہاں بھی سزا برقرار رکھنے کے بعد ملزم نے سپریم کورٹ سے رجوع کیا لیکن وہاں بھی ناکامی کا سامنا کرنا پڑا تھا.

بعد ازاں ملزم نے صدر مملکت ممنون حسین سے رحم کی اپیل کی جسے مسترد کردیا گیا جس کے بعد ملزم کو آج کیفر کردار تک پہنچادیا گیا.


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top