The news is by your side.

Advertisement

سانحہ کرائسٹ چرچ: شام سے تعلق رکھنے والے شہید باپ بیٹے کو سپردخاک کردیا گیا

کرائسٹ چرچ: سانحہ نیوزی لینڈ میں شام سے تعلق رکھنے والے شہید باپ بیٹے کو سپرد خاک کردیا گیا، اس موقع پر شہری بڑی تعداد میں شریک ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق نیوزی لینڈ میں مساجد پر فائرنگ کے نتیجے میں شہید خالد مصطفیٰ اور بیٹے حمہز کی تدفین کردی گئی، شہریوں کی بڑی تعداد شریک ہوئی۔

نیوزی لینڈ کے میموریل پارک میں نماز جنازہ کے دوران ہر شخص افسردہ تھا، شہریوں نے آہوں اور سسکیوں میں شہیدوں کی تدفین کی۔

دوسری جانب پولیس کا کہنا ہے کہ جاں بحق تمام افراد کا پوسٹ مارٹم مکمل کیا جاچکا ہے، جاں بحق افراد میں سے 12کی باضابطہ شناخت کی جاچکی ہے، جبکہ 6افراد کی میتیں ورثا کے حوالے کردی گئیں۔

یاد رہے کہ گذشتہ جمعے نیوزی لینڈ کی دو مساجد میں دہشت گرد حملے کیے گئے جس کے نتیجے میں خواتین وبچوں سمیت 50 افراد جاں بحق اور 20 زخمی ہوئے تھے۔

مرکزی حملہ آور کی شناخت 28 سالہ برینٹن ٹیرنٹ کے نام سے ہوئی ہے اور وہ آسٹریلوی شہری ہے جس کی تصدیق آسٹریلوی حکومت نے کرکھی ہے۔

حملے کے بعد دنیا بھر میں مسلمانوں کے خلاف نفرت انگیز رویوں کی بھرپور مذمت کی جارہی ہے، سوشل میڈٰیا پر بھی شہری مسلمان مخالف سرگرمیوں کو تنقید کا نشانہ بنارہے ہیں۔

نیوزی لینڈ میں دہشت گردی، حملہ آور کے پاس اسلحہ کہاں سے آیا؟

دوسری جانب پولیس گرفتار حملہ آور سے بھی تحقیقات کررہی ہے، ابتدائی اطلاعات کے مطابق دہشت گرد نے حملے کے لیے جو اسلحہ استعمال کیا وہ آن لائن خریدا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں