مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی وزیرداخلہ کی آمد پرمظاہرے،احتجاج اورہڑتال -
The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی وزیرداخلہ کی آمد پرمظاہرے،احتجاج اورہڑتال

سری نگر: بھارتی وزیرداخلہ کی آمد کے موقع پرکہیں مظاہرے،کہیں احتجاج اورکہیں ہڑتال کی گئی مظاہرین پرقابض افواج کے تشدد سے 80 افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق کی کشمیر میں‌ تشدد کی نئی لہراُس وقت پھوٹ پڑی جب شوپیاں کے علاقے میں قابض بھارتی افواج نے احتجاج کرنے والے مظاہرین پر دھاوا بول دیا جس کے دوران 80 سے زائد کشمیری زخمی ہوگئے جس کے بعد مشتعل مظاہرین نے زیرتعمیرسیکریٹریٹ کوآگ لگا دی۔

اسی سے متعلق : نوجوان حریت پسند رہنما برہان وانی شہید

واضح رہے نہتے مظلوم کشمیری بھارتی وزیر داخلہ کی کشمیر آمد پر پُرامن مظاہرے کررہے ہیں،بھارتی وزیر داخلہ کی مشہور حریت پسند نوجوان برہان وانی کی شہادت کے بعد پہلی مرتبہ کشمیر کے دورے پر آئے تھے

یہ خبر پڑھیں : برہان وانی کشمیریوں کے رول ماڈل بن گئے،سابق سربراہ را

کشمیر میڈیا سروس کے مقبوضہ وادی میں اٹھاون ویں روز بھی صورتحال کشیدہ ہے،سری نگر سمیت کئی علاقوں میں کرفیو نافذ ہے جبکہ بھارتی وزیرداخلہ کی آمد کے موقع پر تشدد کی نئی لہر بھی دیکھی گئی ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں : مقبوضہ کشمیر، مسلسل 50 ویں روز بھی کرفیو

دوسری جانب بھارتی وزیر داخلہ کی کشمیر آمد پر آل پارٹیزحریت کانفرنس کی جانب سے آج مختلف علاقوں میں ہڑتال بھی کی جارہی ہے جب کہ مسلسل کرفیو کے باعث پوری وادی میں نظام زندگی مفلوج ہے اور لوگ گھروں میں قید ہوکر رہ گئے ہیں جنہیں غذائی اشیا کی شدید قلت کا بھی سامنا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں