The news is by your side.

Advertisement

ماسک پہننے کا مشورہ دینے پر سفاک بہنوں نے سیکیورٹی گارڈ کو موت کے دہانے پر پہنچا دیا

واشنگٹن: امریکا میں سیکیورٹی گارڈ کی جانب سے ماسک پہننے کا مشورہ دینا جرم بن گیا، دو سفاک بہنوں نے چاقو کے پے درپے وار کرکے گارڈ کو شدید زخمی کردیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی روپورٹ کے مطابق حملے کا یہ واقعہ امریکی ریاست ایلی نوائس کے شہر شکاگو میں پیش آیا جہاں ایک اسٹور کے سیکیورٹی گارڈ نے دو بہنوں کو کرونا سے بچاؤ کے لیے فیس ماسک پہننے کا کہا جس پر وہ دنوں آگ بگولہ ہوگئیں اور گارڈ پر چاقو کے 27 وار کیے۔

رپورٹ کے مطابق 12 سالہ جیسیکا اور 18 سالہ جیلا کو پولیس نے گرفتار کرکے اقدام قتل کا مقدمہ درج کرلیا۔ پراسیکیورٹر کا کہنا ہے کہ بہنوں نے مل کر گارڈ کے جسم پر چھری کے 27 وار کیے جس کے باعث اس کی حالت تشویش ناک ہے۔

پولیس نے بتایا ہے کہ گارڈ نے اسٹور میں داخلے کے لیے وہاں موجود ہیڈ سینیٹائزر استعمال کرنے کو کہا اور یہ بھی مشورہ دیا کہ ماسک پہن لیں، سیکیورٹی گارڈ کا یہ تلقین لڑکیوں‌ کو نہ بھائی اور حملہ کردیا۔

حملے کے دوران ایک بہن نے گارڈ کو پکڑا جبکہ دوسری نے چاقو کے پے درپے وار کیے، زخمی گارڈ کا مقامی اسپتال میں علاج جاری ہے جہاں اس کی حالت تشویش ناک ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں