The news is by your side.

Advertisement

طالبان نے روس سے مدد مانگ لی

افغانستان کے نائب وزیراعظم سے ملاقات کے بعد روسی ماہرین نے طالبان کے زیر قبضہ روسی ہیلی کاپٹروں کی مرمت پر رضامندی ظاہر کردی ہے۔

طالبان کے نائب ترجمان نے دعویٰ کیا ہے کہ روسی ماہرین نے طالبان کے قبضے میں موجود روسی ہیلی کاپٹروں کی مرمت پر رضامندی ظاہر کردی ہے

غیرملکی ویب سائٹ نے طالبان کے نائب ترجمان انعام اللہ سمنگانی کے حوالے سے خبر دی ہے کہ ورٹیکل ٹی ایئر کمپنی کے سی ای او ولادیمیر سکوریخن اور اسمال ہیلی کاپٹر مرمت کرنے والی کمپنی کے چیئرمین الیگزینڈر کلاچوف نے ایک بیان میں تصدیق کی ہے کہ انہوں نے افغانستان کے نائب وزیر اعظم برائے سیاسی امور مولوی عبدالکبیر سے ملاقات کی ہے۔

طالبان کے نائب ترجمان نے دعویٰ کیا کہ روسی ماہرین نے روسی ہیلی کاپٹروں کی مرمت پر رضامندی ظاہر کی جو اب طالبان کے قبضے میں ہیں اور انہوں نے مولوی عبدالکبیر کو اس بابت تجاویز دی تھیں۔

جاری بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ مولوی عبدالکبیر نے روسی ماہرین کو یقین دلایا کہ افغانستان میں عالمی سلامتی کو یقینی بنایا گیا ہے اور غیر ملکی کمپنیوں کو سرمایہ کاری کا موقع ملے گا۔ ورٹیکل ٹی ایک روسی فضائی کمپنی ہے جو ہیلی کاپٹر بناتی ہے۔ یہ کمپنی کئی سالوں سے افغانستان میں سرگرم ہے، جو سابق افغان حکومت کی ملکیت والے روسی ہیلی کاپٹروں کی دیکھ بھال کیلیے خدمات فراہم کرتی ہے۔ کمپنی کے متعدد ہیلی کاپٹر اقوام متحدہ کی ایجنسیوں سمیت بین الاقوامی امدادی ایجنسیوں نے چارٹر کیے ہیں اور افغانستان میں کام کرتے ہیں۔

اگرچہ روسی ماہرین اور طالبان رہنماؤں کے درمیان ہونے والی بات چیت کے بارے میں مزید کوئی تفصیلات دستیاب نہیں ہیں، لیکن ایسا لگتا ہے کہ طالبان نے سابق افغان حکومت کے چھوڑے گئے ہیلی کاپٹروں کو دوبارہ فعال کرنے کے لیے روسی حکومت اور اس کی ایئر لائنز کی مدد لی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں