The news is by your side.

Advertisement

کروناوائرس کی پاکستان منتقلی کا خطرہ، انتظامیہ حرکت میں آگئی

کوئٹہ: ایران میں کروناوائرس کی موجودگی کے پیش نظر بلوچستان میں پی ڈی ایم اے حرکت میں آگئی۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی(پی ڈی ایم اے) نے وائرس سے بچاؤ کے لیے ضروری سامان تافتان روانہ کردیے۔

پی ڈی ایم اے کا کہنا ہے کہ خیمہ اسپتال اور 10 ہزار ماسک بھی تافتان روانہ کر دیئے۔ 2موبائل آفس یونٹس، 4موبائل کنٹینرز اور10ایمبولینسز بھی روانہ کیے گئے ہیں۔

خیال رہے کہ ایران میں کرونا وائرس سے 5 افراد کی ہلاکتوں کے بعد وائرس کی پاکستان منتقلی کا خطرہ بڑھ گیا ہے، جس کے بعد بلوچستان حکومت نے تافتان بارڈر پر اضافی عملے کی تعیناتی کافیصلہ کیا ہے تفتان بارڈر سے یومیہ ہزاروں زائرین پاکستان داخل ہوتےہیں۔

ایران سے کرونا وائرس کی پاکستان منتقلی کا خطرہ

ایران سے کرونا وائرس کی پاکستان منتقلی کے خدشات بڑھ گئے ہیں، ذرائع کا کہنا ہے کہ تافتان بارڈر سے روز ہزاروں زائرین پاکستان میں داخل ہوتے ہیں تاہم پاک ایران تافتان بارڈر پر کرونا سکریننگ کے انتظامات نہیں۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ بلوچستان حکومت نے تافتان بارڈر پر اضافی عملے کی تعیناتی کافیصلہ کیا ہے ، تافتان بارڈر پر تعیناتی کیلئے ڈاکٹرز کی خصوصی ٹیم روانہ کردی گئی ہے ، ڈاکٹرز کی6 رکنی ٹیم کوئٹہ سے بذریعہ ہیلی کاپٹر تافتان روانہ ہوئی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں