The news is by your side.

Advertisement

ڈالر سے متعلق گورنر اسٹیٹ بینک نے خوش خبری سنا دی

کراچی: گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کا کہنا ہے کہ ڈالر کی قیمت میں اب استحکام آ گیا ہے، ڈالر کی اب کوئی قلت نظر نہیں آتی۔

تفصیلات کے مطابق گورنر اسٹیٹ بینک نے کہا ہے کہ ملک میں اب کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ سرپلس میں ہے، ڈالر کی قیمت بھی مستحکم ہو گئی ہے اور قلت بھی نہیں رہی۔

انھوں نے کہا کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ بہتر کرنے کے لیے ایکسچینج ریٹ مارکیٹ بیس سپلائی کے تحت چلایا گیا، جس سے خسارہ سر پلس میں آ گیا ہے۔

رضا باقر کا کہنا تھا جولائی سے جاری معاشی بحالی حالیہ مہینوں میں مزید مستحکم ہوئی، اب ایکس چینج ریٹ مستحکم دکھائی دے رہا ہے، ڈالر کی قیمت میں بھی استحکام ہے، آئندہ بیلنس آف پیمنٹ کے لیے زر مبادلہ کو نہیں چھیڑا جائے گا۔

رواں ہفتے مہنگائی میں کتنا اضافہ ہوا؟

دریں اثنا، اسٹیٹ بنک نے شرح سود 7 فی صد پر برقرار رکھنے کا اعلان کر دیا ہے، گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کہتے ہیں، آئندہ 2 ماہ کے لیے شرح سود کو مستحکم رکھا گیا ہے، مستقبل قریب میں شرح سود اسی سطح پر دیکھ رہے ہیں۔

انھوں نے کہا معاشی حالات بہتر ہونے کے باوجود ہمیں مزید کام کرنا ہوگا، بجلی کی قیمتوں اور غذائی اجناس کی وجہ سے مہنگائی بڑھی، کرونا کے معیشت پر اثرات اب بھی موجود ہیں، رواں مالی سال مہنگائی کی شرح 8 سے 9 فی صد رہنے کی توقع ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں