The news is by your side.

Advertisement

اینٹی مائیکروبیل مزاحمت عالمی سطح پرصحت کے لیے سنگین خطرہ ہے: برطانوی ہائی کمشنر

اینٹی مائیکروبیل مزاحمت میں کمی حکومتی ترجیح ہے: سربراہ قومی ادارہ صحت

اسلام آباد: برطانوی ہائی کمشنر تھامس ڈریو نے قومی ادارۂ صحت کا دورہ کر کے سربراہ این آئی ایچ میجر جنرل عامر اکرام سے ملاقات کی جس میں باہمی دل چسپی اور دو طرفہ تعاون کے فروغ کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سربراہ قومی ادارہ صحت میجر جنرل عامر اکرام نے دورے پر آئے ہوئے برطانوی ہائی کمشنر تھامس ڈریو کو بریفنگ دی۔

اس موقع پر برطانوی ہائی کمشنر نے کہا کہ ان کے دورے کا مقصد پاکستان سے شعبہ صحت میں تعاون کو فروغ دینا ہے، اینٹی مائیکروبیل مزاحمت سے سالانہ ہزاروں اموات ہو رہی ہیں، یہ عالمی سطح پر صحت کے لیے سنگین خطرہ ہے۔

سربراہ قومی ادارہ صحت نے انھیں بتایا کہ اینٹی مائیکروبیل مزاحمت میں کمی حکومتی ترجیح ہے، اس سلسلے میں ایکشن پلان مشاورت سے ترتیب دیا گیا ہے۔

تھامس ڈریو نے اینٹی مائیکروبیل مزاحمت سے متعلق این آئی ایچ کی کارکردگی کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ برطانیہ 6 پروفیشنل فیلوشپ کے لیے پاکستان کو فنڈز فراہم کرے گا، اور پاکستان کو لیبارٹری سہولیات میں بہتری اور پیشہ ورانہ تربیت بھی دے گا۔

واضح رہے کہ اینٹی مائیکروبیل ریزسٹنس کسی جرثومے (بیکٹیریا، وائرس، چند پیراسائٹس) کی وہ صلاحیت ہے جس کے ذریعے وہ اس دوا کے اثرات کے خلاف مزاحمت کرتا ہے، جو کبھی اس کے علاج کے لیے کام یابی سے استعمال ہوتی رہی ہو۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں