The news is by your side.

Advertisement

پنجاب میں بڑی دہشت گردی کا خطرہ حساس اداروں کا مراسلہ جاری

لاہور: پنجاب میں ممکنہ دہشت گردوں کے حملوں کا خطروں کے پیش نظر حساس اداروں نے پنجاب حکومت کو مراسلہ جاری کردیا ہے۔

ذرائع کے مطابق حساس اداروں نے پنجاب حکومت کو بھیجے گئے مراسلے میں کہا ہے کہ تحریک طالبان منصور اور تحریک طالبان سجنا گروپ کی جانب سے 17 دہشت گرد پنجاب کے مختلف علاقوں میں بھیجے گئے ہیں، جو پنجاب کے تعلیمی اداروں اسپتالوں اور بازاروں کو دہشت گردی کا نشانہ بنا سکتے ہیں۔

مراسلے میں کہا گیا ہے کہ تحریک طالبان منصور گروپ کے 6 اور تحریک طالبان سجنا گروپ کے 11 خودکش ببمار پنجاب کے مختلف علاقوں میں داخل ہوگئے ہیں، جو خاص طور پر لاہور، راولپنڈی، فیصل آباد اور ملتان میں تعلیمی اداروں، اسپتالوں، مارکیٹوں، پارکوں اور دیگر عوامی مقامات پر دہشت گردی کرنے کی حکمت عملی بنارہے ہیں۔

حساس ادارے کے ذرائع نے بتایا ہے کہ خط میں آگاہ کیا گیا ہے کہ دہشت گردوں کا اہم نشانہ بہاؤالدین زکریا یونیورسٹی اور نشتر میڈیکل کالج ہوسکتے ہیں۔

محکمہ داخلہ پنجاب نے تعلیمی اداروں کے سربراہان کو ممکنہ حملوں کے خطرے سے آگاہ کردیا ہے اور انتظامیہ کو حملوں کی روک تھام کے لیے ہر سطح پر فول پروف سیکورٹی انتظامات کو یقینی بنانے کی ہدایت جاری کردی گئی ہے۔

قبل ازیں حساس ادارے نے وفاقی حکومت کو افغانستان سے پاکستان دہشت گردوں کے حوالے سے آگاہ کردیا تھا، جن میں سے دودہشت گرد خیبرپختونخواہ کے علاقے شبقدر اور مردان میں حملہ کر چکے ہیں جبکہ دیگر دہشت گرد بالخصوص پنجاب کے بڑے شہروں میں حملوں کی منصوبہ بندی کررہے ہیں۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں