The news is by your side.

Advertisement

حکومت اور ٹی ایل پی مذاکرات کامیاب، شیخ رشید نے بیان جاری کر دیا

اسلام آباد: حکومت اور تحریک لبیک پاکستان کے درمیان مذاکرات کامیاب ہو گئے ہیں، اس سلسلے میں وزیر داخلہ شیخ رشید کی جانب سے اہم ویڈیو پیغام جاری کیا گیا ہے۔

شیخ رشید نے پیغام میں کہا کہ حکومت پاکستان اور کالعدم ٹی ایل پی کے درمیان طویل مذاکرات ہوئے، طے پایا ہے کہ فرانسیسی سفیر کی ملک بدری کی قرارداد پیش کی جائے گی، یہ قرارداد قومی اسمبلی میں آج پیش کی جائے گی۔

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے کہا کہ ٹی ایل پی مسجد رحمت اللعالمینﷺ سمیت ملک بھر سے دھرنے ختم کرے گی، جب کہ بات چیت اور مذاکرات کا سلسلہ آگے بڑھایا جائے گا، جن کے خلاف مقدمات ہیں، فورتھ شیڈول سمیت، ان کا اخراج کیا جائے گا۔

شیخ رشید نے کہا کہ اس سلسلے میں تفصیلی بیان آج شام یا کل دوپہر پریس کانفرنس میں دوں گا۔

ادھر وزیر مذہبی امور و اوقاف پنجاب سید سعید الحسن شاہ نے ایک بیان میں کہا کہ مذاکرات میں تمام مراحل کامیابی سے طے پا گئے، ماہ رمضان کی برکت ملک بڑے فتنے سے بچ گیا، بریک تھرو میں کامیاب ہوگئے ہیں، تحریک لیبک اسلام آباد میں لانگ مارچ نہیں کرے گی۔

راولپنڈی: مظاہرین نے لال حویلی کا گھیراؤ کرلیا

کالعدم ٹی ایل پی سے مذاکرات کرنے والے علمائے اہل سنت کا بھی ویڈیو بیان جاری ہوا، صاحب زادہ حامد رضا نے بیان میں کہا عوام کو کامیاب مذاکرات پر مبارک باد پیش کرتے ہیں، کارکنوں کی رہائی کا مرحلہ آج شروع ہو جائے گا، جب کہ پرائیویٹ ممبر اسمبلی میں فرانسیسی سفیر سے متعلق قرارداد پیش کرے گا۔

حامد رضا نے کہا فورتھ شیڈول میں ڈالے گئے افراد پر نظر ثانی کی جائے گی، علمائے اہل سنت حکومتی کمیٹی نہیں ہے، ہم نے ثالثی کا کردار ادا کیا ہے، امید ہے حکومت معاہدے پر عمل کرے گی۔

دوسری طرف ذرائع کا کہنا ہے کہ رکن ٹی ایل پی شوریٰ شفیق امینی اور دیگر مرکزی رہنما بیان جاری کریں گے، جب کہ حکومتی اعلان شیخ رشید، نورالحق قادری اور راجہ بشارت کریں گے، ذرائع نے کہا کہ 16 ایم پی او کے تحت گرفتار 2600 افراد ملک بھر سے رہا کیے جائیں گے، کالعدم تنظیم کے جن کارکنان پر مقدمات ہیں ان کی ضمانتیں کروائی جائیں گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں