The news is by your side.

Advertisement

زہریلی شراب پینے سے ہلاک افراد کی تعداد 49 ہوگئی

کمالیہ: ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ میں زہریلی شراب پینے سے ہلاک افراد کی تعداد 49 ہوگئی، شراب پینے سے 85 سے زائد افراد متاثر ہوئے جن میں سے متعدد کی حالت تشویش ناک ہے۔

تفصیلات کے مطابق ٹوبہ ٹیگھ سنگھ کے علاقے مبارک آباد کی گلی گلی میں کہرام مچا ہوا ہے، تقریباً ہر گھر سے لاش نکل رہی ہے۔

کرسمس کے موقع پر زہریلی شراب پینے سے ہلاک افراد کی تعداد 49 ہوگئی ہے، جس میں مزید اضافے کا خدشہ ہے، مقامی انتظامیہ نے متاثرہ افراد کو تشویش ناک حالت میں الائیڈ اسپتال فیصل آباد جبکہ بقیہ افراد کو ڈی ایچ کیو ٹوبہ ٹیک سنگھ میں منتقل کیا تھا جہاں پر ہلاک افراد کی تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے۔

ہلاک ہونے والے افراد میں سے ایک بوڑھی ماں کے دو ہی بیٹے سجاول اورامجد بھی شامل ہیں، اور دونوں ہی اسے ہمیشہ کے لیے چھوڑ گئے۔

ہلاک ہونے والے 21 سالہ شاہد کی ماں کو یقین ہی نہیں آرہا کہ اس کا بیٹا دنیا سے چلا گیا اسی طرح چھوٹے بھائیوں شہباز اور دانیال کی موت نے بڑے بھائی کو توڑ کر رکھ دیا۔

مزید پڑھیں : ٹوبہ ٹیگ سنگھ ،زہریلی شراب فروخت کرنے والا مبینہ ملزم گرفتار

ڈی پی اوعثمان اکرم گوندل کاکہنا ہے کہ زہریلی شراب فراہم کرنے کے شبہے میں ڈاکٹرسردار زیرحراست ہے۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے ضلعی صدر رشید مسیح کا کہنا ہے کہ پولیس لائن ٹوبہ ٹیک سنگھ کا سینٹری ورکر تھانے سے شراب لایا تھا۔

مزید پڑھیں:جہلم میں زہریلی شراب پینے سے10افراد ہلاک

واضح رہے کہ رواں سال اکتوبر میں جہلم کی کرسچن کالونی میں شادی کی تقریب کے دوران زہریلی شراب پینے سے 10افراد جان کی بازی ہارگئے تھے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں