The news is by your side.

Advertisement

ٹوکیو اولمپک: انٹرنیشل اولمپک کمیٹی کا اہم اعلان

ٹوکیو: انٹرنیشل اولمپک کمیٹی کے سربراہ اور جاپانی وزیراعظم نے ٹوکیو اولمپک کے انعقاد کے لئے آپس میں تعاون جاری رکھنے پر اتفاق کیا ہے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹ کے مطابق آئی او سی کے سربراہ تھامس باخ نے جاپان کا دورہ کیا اور وزیراعظم جاپان سے ملاقات کی، دونوں رہنماؤں کے درمیان ملاقات تیس منٹ تک جاری رہی۔ملاقات میں جاپانی وزیر اعظم سوگا نے کہا کہ جاپان آئندہ موسم گرما میں گیمز کے انعقاد کا عزم رکھتا ہے، جس کا واضح پیغام یہ ہوگا کہ بنی نوع انسان نے وائرس پر قابو پا لیا ہے، ان مقابلوں سے دنیا کو یہ بھی دکھایا جا سکے گا کہ جاپان میں دو ہزار گیارہ کے زلزلے اور سونامی سے متاثرہ علاقوں کی بحالی کیسے ممکن ہوئی ہے۔

ملاقات میں جاپانی وزیر اعظم نے کہا کہ حکومت آئی او سی کے ساتھ قریبی تعاون سے کھیلوں کو محفوظ انداز میں منعقد کرنے کی ہر ممکن کوشش کرے گی، اس موقع پر آئی او سی کے سربراہ نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ہم ایک بار پھر ان اولمپک کھیلوں کو اس دنیا کے لیے یکجہتی اور اتحاد کی عظیم علامت بنا دیں گے، انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ اولمپک مشعل ’اُس تاریک سرنگ کے اختتام پر پھوٹنے والی روشنی ہو گی، جس میں اس وقت یہ دنیا ہے۔

Tokyo Olympics 2020 Ahead of Japan visit IOC chief Thomas Bach confident fans will attend Games

آئی او سی کے سربراہ نے کرونا وائرس کی عالمی وبا کے باعث ٹوکیو اولمپک اور پیرالمپک گیمز ایک سال تک ملتوی ہونے کے بعد پہلی بار جاپان کا دورہ کیا ہے۔

اس سے قبل بین الاقوامی اولمپک کمیٹی کے نائب صدر نے اعلان کیا تھا کہ کرونا ہونے یا نہ ہونے دونوں صورتوں میں آئندہ برس ٹوکیو اولمپکس کا انعقاد لازمی کیا جائے گا۔

جان کوٹس کا کہنا تھا کہ ٹوکیو اولمپکس کا آغاز اگلے سال 23 جولائی سے ہوگا اور پورا ایونٹ اپنے شیڈول کے مطابق منعقد کیا جائے گا، جو پروگرام طے کرلیا گیا ہے اُن تاریخوں میں کسی بھی صورت کوئی تبدیلی نہیں کی جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں:  ٹوکیو اولمپکس سے متعلق اہم اعلان، ٹکٹ ہولڈر خوش

یاد رہے کہ کرونا وائرس کے باعث ملتوی ہونے والے اولمپکس کی نئی تاریخیں مقرر کی گئی ہیں۔ جس کے مطابق ٹوکیو اولمپکس 23 جولائی سے 8 اگست 2021 میں ہوں گے، پہلے یہ مقابلے رواں برس 24 جولائی میں شیڈول تھے۔

دوسری جانب جاپان میڈیکل ایسوسی ایشن نے نئی تاریخوں پر بھی سوالات اٹھائے ہیں۔ کھیلوں‌ پر نظر رکھنے والے کئی تجزیہ کاروں کا کہنا تھا کہ مستقبل میں اولمپکس کا انعقاد مشکل ہے، اس کی بڑی وجہ بے قابو مہلک وائرس ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں