The news is by your side.

Advertisement

سال 2015 کے مشہور بالی ووڈ تنازعات

بالی وڈ کی مشہور شخصیات اس سال شہ سرخیوں میں رہے، لیکن سب اچھی وجوہات کے لئے نہیں رہے۔

سال 2015 کے بالی ووڈ تنازعات پر ایک نظر ڈالتے ہیں۔

انوشکا شرما، بھارتی ٹیم کی شکست کی ذمہ دار

کتنی عجیب بات ہے کہ آسٹریلیا میں اہم ورلڈ کپ میچ بھارتی ٹیم کے گیارہ کھلاڑیوں کی شکست کیلئے ایک آدمی کی گرل فرینڈ مورد الزام ٹھہرایا گیا۔

ایک پوری ٹیم کے نقصان کے لئے ایک آدمی کی گرل فرینڈ کو دوش دینا، یہ بھارت میں صرف ہوتا ہے۔


یہ بات انوشکا شرما کی ہورہی ہے، جو میلبورن میں آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ کا سیمی فائنل دیکھنے اسٹیڈیم میں موجود تھی، میچ کے دوران ویرات کوہلی صرف ایک رن بنا کر جانسن کی کی گیند پر آؤٹ ہوئے اور ایک کیچ بھی ڈراپ کیا، ہندوستانی بلے باز ویرات کوہلی کی ناقص کارکردگی کا ذمے دار ہندوستانی اداکارہ کو قرار دے دیا۔

لوگوں کا کہنا تھا کہ کوہلی ہندوستان کے اہم ترین بلے باز ہیں اور لیکن اس اہم میچ میں ان کی تمام توجہ اپنی گرل فرینڈ انوشکا شرما پر مرکوز تھی، جس کی وجہ سے وہ کچھ خاطر خواہ کارکردگی نہ دکھا سکے۔

بھارت میں بڑھتی ہوئی مذہبی انتہا پسندی

بھارت میں بڑھتی ہوئی مذہبی انتہا پسندی کے خلاف بالی ووڈ سپر سٹار شاہ رخ اور عامر خان کے بیان نے بھارت کے کئی شہروں میں ہلچل مچادی اور دونوں اداکاروں کو شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا۔

بولی ووڈ سپر اسٹار شاہ رخ اور عامر خان کو سیاسی رہنماؤں اور اداکاروں کی جانب سے بھی تنقید کا نشانہ بنایا گیا، کئی تنظیموں اور رہنماوں نے مختلف شہروں میں انکے خلاف مظاہرے کئے، عامرخان اور شاہ رخ خان کے پوسٹرز اور پتلے نذر آتش کئے گئے اور سنگین نتائج اور ملک چھوڑنے کی دھمکیاں بھی دی گئیں۔

بالی ووڈ کے بادشاہ کو پاکستانی ایجنٹ کہا گیا جبکہ شاہ رخ اور عامر خان کو ناشکرے قراردیتے ہوئے سانپ سے تشبیہ دی گئی۔

اشتہار میں نسل پرستانہ تصاویر، اداکارہ ایشوریا رائے پر سخت تنقید

فن اور تخلیقی ہزارہا تشریحات کر سکتے ہیں، بالی ووڈ اداکارہ ایشوریا رائے ایک جیولری کمپنی کے اشتہارمیں کام کرنے پر مشکل میں پھنس گئیں، ایشوریا رائے کو زیورات کے اشتہار میں نسل پرستانہ تصاویر پر بھارت بھر میں سخت تنقید کا سامنا رہا۔

ایشوریا رائے کو کلیان جیولرز کی برینڈ ایمبیسیڈر مقررکیا گیا تھا، اس اشتہار میں ایک سانولے رنگ کے دبلے پتلے بچے کو دکھایا گیا ہے، جو ایک زیورات سے لدی سفید رنگت کی اداکارہ پر سرخ چھتری تانے کھڑا ہے، انسانی حقوق کی علم بردار تنظیموں نے ایشوریا رائے کے اشتہار کو نسل پرستانہ قرار دیتے ہوئے اداکارہ کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔

مختلف تنظیموں کی طرف سے ایشوریا رائے کو ایک کھلا خط لکھا گیا ہے جس میں کہا گیا کہ اشتہارمیں دکھائی گئی تصاویرانتہائی قابلِ اعتراض اورنسل پرستانہ ہیں ،ایشوریا رائے کو اس اشتہار میں کام کرنے پر معافی مانگنے کے ساتھ ساتھ اس سے لاتعلقی کا بھی اظہار کرنا چاہئے، تنقید کے بعد کمپنی نے اپنے فیس بک پیج پر معذرت شائع کی اور اشتہار ہٹا دیا۔

میگی نوڈلز تنازعہ : امیتابھ بچن، مادھوری ڈکشت اور پریتی زنٹا مشکل میں پھنس گئے

نوڈلز برانڈ کی تشہیر پر بولی وڈ اداکار امیتابھ بچن، مادھوری ڈکشت اور پریتی زنٹا مشکل میں پھنس گئے اور انکے خلاف ایف آئی آر درج کرلی گئی۔

بارہ بنکی سے لئے گئے میگی کے نمونے میں مونو سوڈیم گلوٹامیٹ پایا گیا تھا، اس کے بعد تحقیقات کے لئے لکھنؤ سے 13 نمونے لئے گئے تھے، ان میں بھی مونو سوڈیم گلوٹامیٹ پایا گیا ہے۔

میڈیکل ماہرین کے مطابق مونو سوڈیم گلوٹامیٹ 12 سال سے کم بچوں کے لئے کافی نقصان دہ ہوتا ہے، اس کھانے سے بچوں کے نروس سسٹم پر برا اثر پڑ سکتا ہے. اس لئے اسے ملانے کے بعد اسے ڈکلیئر کرنا ضروری ہوتا ہے، لیکن میگی کے پیکٹ پر اس بارے میں کوئی وضاحت بیان نہیں کی گئی، اسے قوانین کی سراسر خلاف ورزی سمجھا جا رہا ہے۔

اے آئی بی کی جانب سے شو کے دوران نازیبا الفاظ استعمال کرنے پر تنازعہ

آپ لوگوں کو یاد ہوگا بھارت میں عوامی مقام پر پروگرام کے دوران نازیبا زبان استعمال کرنے پر بالی ووڈ کے نامور ہدایت کار کرن جوہر، رنویر سنگھ اور ارجن کپور تنازعات کا شکار رہے۔

کامیڈی گروپ ’اے آئی بی‘ کی جانب سے منعقد ایک شو کے دوران نازیبا الفاظ استعمال کرنے پر ہدایت کار کرن جوہر اور بالی ووڈ اداکاروں ارجن کپور، رنویر سنگھ، کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا۔

بالی وڈ کی ان 14 شخصیات پر اے آئی بی نامی کمپنی کے ایک پروگرام میں شرکت اور کھلے عام نازیبا مذاق کرنے کا الزام لگایا گیا ہے، اے آئی بی کے منتظمین میں تنمے بھٹ، روحان جوشی،اشیش شکیہ اور گرسیمران کھمبا شامل ہیں۔اس پروگرام کے دوران بولی وڈ اداکاروں رنویر سنگھ،، ارجن کپور، میزبان کرن جوہر اوردیگر افراد نے ایک دوسرے کے بارے میں فحش مذاق اور نا زیبا الفاظ استعمال کیے۔

مقدمے میں دیپکا پڈوکون، سوناکشی سنہا، عاليہ بھٹ اور سنجے کپور سمیت بالی وڈ کی چند اہم شخصیات کو بھی فریق بنایا گیا ہے، جو اس شو میں شریک تھے، شو کی ویڈیو رواں برس جنوری میں یو ٹیوب پر پوسٹ ہوتے ہی چند ہی گھنٹے میں اسے دیکھنے والے افراد کی تعداد 80 لاکھ سے تجاوز کر گئی، تاہم شدید عوامی تنقید کے بعد اس ویڈیو کو یو ٹیوب سے ہٹا دیا گیا۔

سلمان خان تنازعات کی زد میں

سلمان خان کیلئے سال 2015 جہاں کامیابی کا سال رہا وہی انکو مشکلات کا سامنا بھی رہا ، صرف بھارتی باکس آفس پر 500 کروڑ روپے کمائے اور بالی ووڈ میں سو اور دو سو کروڑ کی سب سے زیادہ فلمیں دینے والے ہیرو بن گئے۔ سلمان کی فلم بجرنگی بھائی جان نے تین سو کروڑ کمائے، جبکہ انکی حالیہ فلم پریم رتن دھن پایو بھی اس سال کی کامیاب فلم ثابت ہوئی۔

ممبئی ہائی کورٹ نے سلمان خان کو رواں برس 6 مئی کو ہٹ اینڈ رن کیس 2002 میں مجرم قرار دے کر 5 سال قید اور 25 ہزار جرمانے کی سزا سنائی تھی، سلمان خان پر الزام ہے کہ وہ ستمبر 2002 کی ایک رات ممبئی میں شراب پی کر گاڑی چلاتے ہوئے کنٹرول کھو بیٹھے جس کے نتیجے میں ایک شخص ہلاک اور کئی زخمی ہوگئے، بعد ازاں وہ جائے حادثہ سے فرار ہوگئے، تاہم دسمبر میں ممبئی ہائی کورٹ نے بولی وڈ اداکار سلمان خان کو ‘ہٹ اینڈ رن’ کیس سے بری کردیا.

اس سے قبل بالی وڈ کے دبنگ خان انیس سو ترانوے کوممبئی بم دھماکوں میں سزا یافتہ یعقوب میمن کی حمایت میں کھڑے ہو گئے اور ایک ٹوئٹ میں اس رائے کا اظہار کیا ہے کہ ٹائیگر میمن کو پھانسی دے دی جائے لیکن اس کے بھائی یعقوب کو نہیں، جس نے بھارت میں ہندو قوم پرست حلقوں میں شدید غصے کی لہر دوڑ گئی اور سلمان خان کو اپنے اُس ٹوئٹر پیغام کو واپس لینا پڑا۔

ٹوئٹر کے منچلے

اکثر ٹوئٹر پر منچلے اس انتظار میں رہتے ہیں کب کوئی مشہور شخصیات سماجی اور سیاسی مسائل پر تبصرہ کرے اور وہ ان شخصیات کو تنقید کا نشانہ بنائے، جیسے میگی تنازعہ ، گائے کے گوشت پر پابندی، غلام علی کے کنسرٹ پر پابندی ، بھارت میں عدم برداشت۔

بد قسمتی سے یہ شخصیات تبصرہ کرکے خود مشکلات میں پھنس جاتے ہیں، جہاں انکو بولنے کی آزادی کا بنیادی حق ہے۔ کیا بالی ووڈ شخصیات کو اپنا منہ بند رکھنا چاہئے؟

بھارتی مداح غلام علی کو بھول گئے

سال 2015 کے تنازعات کی فہرست میں یہ تنازعہ بھی یاد ہے۔

پاکستان کے نامور غزل گائیک غلام علی نے شیو شینا کی جانب سے دھمکیاں ملنے کے بعد پہلے ممبئی اور پھر نئی دہلی میں بھی اپنی پرفارمنس منسوخ کردی۔

ہندو انتہا پسندوں کی دھمکیوں اور نارواں سلوک کے بعد غلام علی نے ساری زندگی ہندوستان نہ جانے کا اعلان بھی کیا۔

بالی ووڈ اداکارہ رادھیکا آپتے کی متنازعہ ویڈیو

بالی ووڈ اداکارہ رادھیکا آپتے اپنی متنازعہ ویڈیو لیک ہونے کی وجہ سے خبروں میں رہی، سب سے پہلے ایک ایم ایم ایس انٹرنیٹ پر منظر عام آیا ، جس میں ایک اداکارہ تھی جو رادھیکا سے مشابہت رکھتی تھی،یہ ویڈیو رادھیکا آپٹی متنازعہ ویڈیو ‘ کی سرخی کے ساتھ وائرل ہوئی۔


جس کے بعد اداکارہ کا ایک اور متنازعہ کلپ منظر عام پر آئی اور یہ کلپ اداکارہ کے ایک پروجیکٹ کی تھی، جس کی ہدایتکاری انوراگ کشپ نے کی تھی، ویڈیو کے لیک ہو جانے کے بعد ڈائریکٹر انوراگ کشیپ نے ممبئی پولیس سے شکایت کی اور ناراضگی کا اظہار کیا۔

ایوارڈ واپسی تحریک

ملک میں بڑھتی ہوئی عدم برداشت کے خلاف ’’ایوارڈ واپسی تحریک‘‘ ایک سیاسی مہم کی شکل اختیار کر گئی ہے اور بھارت میں مودی سرکار ادیبوں، شاعروں، دانشوروں اور فنکاروں کے لیے شرمندگی کا باعث بن گئی ہے۔

ادیبوں، شاعروں، دانشوروں اور فنکاروں نےقومی ایوارڈ واپس کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت بھارت میں جو کچھ ہو رہا ہے وہ اس پر شرمندہ ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں