طورخم بارڈر پر کشیدگی ختم، آمدورفت بحال torkham border reopen
The news is by your side.

Advertisement

طورخم بارڈر پر کشیدگی ختم، آمدورفت بحال

طورخم: پاک افغان حکام کے درمیان فلیگ مٹینگ کے بعد طورخم بارڈر کو آمد ور فت کے لیے کھول دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز طورخم بارڈر پر ہونے والے دستی بم حملوں  کے بعد سیکیورٹی خدشات کی بنا پر بارڈر کو بند کردیا گیا تھاجس کے باعث نیٹو سپلائی اور پیدل آمد و رفت معطل ہوگئی تھی۔

طورخم بارڈر پر ہونے والے حملے میں 8 سیکیورٹی اہلکار اور 6 افغان شہری زخمی ہوئے تھے جنہیں قریبی اسپتال منتقل کیاگیا تھا، طورخم بارڈر بند ہونے کے بعد دونوں طرف کنٹرینرز کی بڑی تعداد جمع ہوگئی تھی۔

بارڈر پر صورتحال کا جائزہ لینے کے بعد پاک افغان حکام نے فلیگ مٹینگ طلب کی جس کے بعد بارڈر کو  ہرقسم کی آمد و رفت کے لیے کھول دیا، پاکستان کی جانب سے بم حملوں میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کا مطالبہ بھی کیا گیا۔

واضح رہے کہ طورخم بارڈر کے راستے کو دہشت گردوں کی جانب سے استعمال کئے جانے کی شکایت سامنے آتی رہی ہیں، جس پر پاکستانی حدود میں گیٹ کی تعمیر کی جارہی ہے تاکہ شرپسندوں کو پاکستان میں داخل ہونے سے روکا جائے۔

سیکیورٹی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لیے  پاکستان نے ملک میں داخلے کے لیے سفری دستاویزات کی شرط عائد کی ہوئی ہے، سفری دستاویز نہ رکھنے والے افغان شہریوں کو ملک میں داخلے کی اجازت نہیں ہے۔


 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں