The news is by your side.

Advertisement

امریکا میں طوفانی بگولے نے تباہی مچادی، بچوں سمیت 23 افراد ہلاک

واشنگٹن : امریکی ریاست الاباما میں ہوا بگولے نے تباہی مچادی، جس کے باعث کئی بچوں سمیت 23 افراد ہلاک ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق امریکا کی ریاست الابامہ کے مشرقی حصّے میں گردش کرنے والے ہوا بگولے نے درجنوں گھروں کو ویران اور سینکڑوں کو تباہ و برباد کردیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ ہوا کے بگولے کی زد میں آکر ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد میں اضافے کا خدشہ ہے جبکہ زخمیوں کی تعداد تاحال نامعلوم ہے، امریکی حکام نے متاثرہ علاقے کو سیل کردیا ہے۔

امریکی محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ ہوا کے بگولے کی رفتار 266 کیلومیٹر فی گھنٹہ تھی۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ ریسکیو ٹیمیں زخمیوں ور ہلاک شدگان کی شناخت کررہی ہیں جبکہ اندھیرے کے باعث سرچ آپریشن روک دیا گیا ہے کہ کیوں اندھیرے میں ریسکیو اہلکاروں کی جان خطرے میں پڑ سکتی ہے۔

مقامی میڈیا کا کہنا ہے کہ طوفانی بگولوں کے نتیجے میں مواصلاتی نظام درہم برہم ہوگیا، ریاست الاباما میں 4 ہزار افراد بجلی سے محروم ہیں جن میں سے دو ہزار افراد کا تعلق ’لی کاؤنٹی‘ سے ہے۔

محکمہ موسمیات نے ہوائی بگولے کے بعد ریاست الاباما میں سردی کی شدت میں اضافے کی پیش گوئی کی ہے۔

مزید پڑھیں: امریکا: سمندری طوفان ’مائیکل‘ کو بموں کی ’ماں‘ قرار

واضح رہے کہ مائیکل نامی ہولناک سمندری طوفان 2 اکتوبر کے روز ریاست کی شمال مغربی پٹی سے 250 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چلنے والی ہواؤں کے ساتھ ٹکرایا تھا۔

خطرناک سمندری طوفان مائیکل کے ساحلی علاقے سے ٹکرانے کے بعد متاثرہ علاقے کا نقشہ بدل گیا ہے، مائیکل نامی طوفان کے بارے میں کہا گیا تھا کہ ’یہ تمام بم دھماکوں کی ماں ہے‘ جس کے نتیجے میں 13 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

خیال رہے کہ 2017 بھی امریکا کے لیے قدرتی آفات کے حوالے سے بدترین ثابت ہوا تھا، یکے بعد دیگرے 4 طوفانوں نے امریکی ریاستوں کو تباہی سے دو چار کیا جبکہ درجنوں ہلاکتیں بھی ہوئی تھیں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں